زرداری اور عمران خان ہم نوالہ بن چکے ،2018 کے انتخابات میں ان کا بوریا بستر گول کر دیں گے :شہباز شریف

زرداری اور عمران خان ہم نوالہ بن چکے ،2018 کے انتخابات میں ان کا بوریا بستر گول ...
زرداری اور عمران خان ہم نوالہ بن چکے ،2018 کے انتخابات میں ان کا بوریا بستر گول کر دیں گے :شہباز شریف

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)مسلم لیگ ن کے صدر اور وزیر اعلی پنجاب شہبازشریف نے کہا ہے کہ لاہور میں اورنج ٹرین منصوبے نے اس سے قبل مکمل ہوجانا تھا لیکن پی ٹی آئی نے عوام دشمنی کرکے  اس میں رکاوٹیں ڈالی، عوام 2018 کے الیکشن میں ان سے عوام دشمنی کا بدلہ لیں گے ،زرداری اب مداری بن کر آ رہا ہے ،بنی گالہ اور بلاول ہاؤس مل گئے ہیں لیکن شیر نے جھپٹا مارنا ہے تو انہوں نے نظر نہیں آنا ۔

اورنج ٹڑین کے ٹیسٹ رن کے موقع پر عوام سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلی پنجاب شہباز شریف کا کہنا تھا کہ عمران خان کی ٹرین چھوٹ چکی ہے، انہیں قومی مسائل کے بارے کوئی علم نہیں ۔ان کا کہنا تھا کہ منصوبہ22ماہ پہلے شروع ہوناتھامگرتحریک انصاف نے د شمنی کی ،تاخیرکے باوجوداورنج لائن ٹرین بازی لے گئی،میٹروبس اوراونج لائن ٹرین غریب عوام کےلیے بنائی،موقع ملاتوخیبرپختونخوااورسندھ میں بھی اورنج ٹرین منصوبہ بنائیں گے۔شہباز شریف کا کہنا تھا کہ عام آدمی کواورنج لائن سے فائدہ ہوگا،پنجاب میں جگہ جگہ ہسپتال،تعلیمی ادارے ا ورمیٹرومنصوبے مکمل کیے۔وزیر اعلیٰ پنجاب نے چیئرمین تحریک انصاف عمران خان اور آصف زرداری پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ زرداری اب مداری بن کر آ رہا ہے ،بنی گالہ اور بلاول ہاؤس مل گئے ہیں،ایک کے پاس بلا ہے ایک کے پاس تیر ہے ،شیر نے جھپٹا مارنا ہے اِنہوں نے نظر نہیں آنا ۔انہوں نے عمران خان کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے کام وہاں نہیں کیا اور لاہور آ کر جھوٹ بولتا ہے ،کام وہاں نہیں کیا اور لاہور آ کر اورنج لائن کا کام بند کراتا ہے ،کام وہاں نہیں کیا اور کہتا ہے کہ شہباز شریف بڑا خطرنا ک ہے ،کیا تمہیں اب پتا چلا ہے کہ میں خطرناک ہوں؟اوئے تمہیں اب پتا لگا ہے کہ میں زیادہ خطرناک ہوں ؟آگے آگے چلو پھر تمہیں پتا لگے گا کہ میں کتنا خطرناک ہوں ؟ہم  تمہارا سیاسی بوریا  بستر اللہ نے چاہا تو گل کریں گے ۔انہوں نے کہا کہ اورنج لائن پر 22 مہینے کی تاخیر نہ ہوتی تو بلیو لائن پر کام شروع ہو چکا ہوتا لیکن بد قسمتی کی بات ہے کہ پی ٹی آئی سے گوارہ نہ ہوا ،مسلم لیگ ن کی دشمنی میں اس نے آپ سے دشمنی کی ،2018 کے الیکشن کی آمد آمد ہے ،آپ بتاؤ مجھے انہوں نے جو آپ سے دشمنی کی ہے آپ اس کا بدلہ لو گے ؟اگر اللہ کو منظور ہوا تو اگلے الیکشن کے تین ماہ بعد ہم بلیو لائن پراجیکٹ کا آغاز کریں گے ۔وزیر اعلی پنجاب نے اورنج ٹرین کے آزمائشی سفر کے کامیاب ہونے پر  اپنی ٹیم کو مبارک باد دی۔

مزید : قومی /علاقائی /پنجاب /لاہور /اہم خبریں