”ورلڈکپ میں پاکستان سے بچ کر رہنا“ سارو گنگولی نے ایک مرتبہ پھر ایسی شاندار بات کہہ دی کہ آپ بھی ان کی ہمت کو داد دیں گے

”ورلڈکپ میں پاکستان سے بچ کر رہنا“ سارو گنگولی نے ایک مرتبہ پھر ایسی شاندار ...
”ورلڈکپ میں پاکستان سے بچ کر رہنا“ سارو گنگولی نے ایک مرتبہ پھر ایسی شاندار بات کہہ دی کہ آپ بھی ان کی ہمت کو داد دیں گے

  

ممبئی (ڈیلی پاکستان آن لائن) انگلینڈ میں شاندار پاکستانی ریکارڈز سے بھارت پرگھبراہٹ طاری ہوگئی ہے، سابق بھارتی کپتان سارو گنگولی نے انگلینڈ کے ہاتھوں دو میچوں میں شکست کے باوجود بھی ایک بار پھر ورلڈ کپ کیلئے قومی ٹیم کو فیورٹس میں شامل قرار دیدیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق گنگولی کا کہنا ہے کہ انگلینڈ میں کھیلے جانے والے عالمی ٹورنامنٹس میں پاکستان کا ریکارڈ شاندار رہا جس نے 2 برس قبل وہاں پر چیمپئنز ٹرافی جیتی جبکہ 2009ءمیں ورلڈ ٹی 20 بھی گرین شرٹس نے انگلش سرزمین پر ہی جیتا تھا اس لئے حالیہ ورلڈکپ میں بھی پاکستانی ٹیم بہترین کارکردگی دکھا سکتی ہے۔

گنگولی نے انگلینڈ پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان جاری سیریز کے دوسرے ون ڈے کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ پاکستانی ٹیم نے ہمیشہ ہی انگلینڈ میں اچھا کھیل پیش کیا، رواں سیریز کا دوسرا ون ڈے دیکھ لیں جس میں انگلینڈ نے 374 رنز بنائے اور پاکستانی ٹیم ہدف کے تعاقب میں صرف 12 رنز سے ہاری، وہ اپنے باﺅلنگ اٹیک کی وجہ سے انگلش ٹیم کو ان کے گراؤنڈز پر ٹیسٹ میچز میں ہرا چکے ہیں۔

گنگولی نے بھارتی کرکٹ ٹیم کی حوصلہ افزائی کیلئے یہ بھی کہا کہ میں ریکارڈز پر یقین نہیں رکھتا، دونوں ٹیموں کو اپنے مخصوص دن میں بہترین کھیل پیش کرنا ہو گا، بھارت ایک اچھی ٹیم ثابت ہو گی جسے ہرانا بہت ہی مشکل ہو گا، جس ٹیم میں کوہلی، روہت اور شیکھر دھون جیسے کھلاڑی ہوں، وہ کس طرح کمزور ہو سکتی ہے؟

جب گنگولی سے کہا گیا کہ وہ موجودہ بھارتی ٹیم اور اپنی قیادت میں 2003ءورلڈ کپ کا فائنل کھیلنے والی ٹیم کا موازنہ کریں تو ان کا جواب تھا کہ دونوں الگ نسلوں کی ٹیمیں تھی، ہم نے 2003ءمیں فائنل کھیلا اور مجھے امید ہے کہ کوہلی الیون اب ٹرافی بھی جیتے گی۔

مزید : کھیل