پی سی ہوٹل پر حملہ کرانیوالے دہشتگردکی پرانی تصویر قرارلیکن دراصل یہ آدمی کون ہے؟ یقین کرنا مشکل

پی سی ہوٹل پر حملہ کرانیوالے دہشتگردکی پرانی تصویر قرارلیکن دراصل یہ آدمی ...
پی سی ہوٹل پر حملہ کرانیوالے دہشتگردکی پرانی تصویر قرارلیکن دراصل یہ آدمی کون ہے؟ یقین کرنا مشکل

  

کوئٹہ (ڈیلی پاکستان آن لائن)گوادر کے پی سی ہوٹل پر حملے کے بعدپاکستان کی سیکیورٹی فورسز نے جوابی کارروائی کرتے ہوئے تین دہشتگردوں کو ٹھکانے لگادیا جبکہ اب میڈیا میں چوتھے دہشتگرد کی جنگل سے لاش ملنے کی خبریں ہیں تاہم زیرنظرتصویر میں موجود حملہ کرنیوالے ایک دہشتگرد سے این ڈی یو کے گریجوایٹ اور ریسرچر حمل کاشانی کی تصویر جوڑدی گئی اور سوشل میڈیا پردعویٰ کیاگیا کہ یہ حملہ آور کی پرانی تصویر ہے تاہم حمل کاشانی نے اس کی تردید کرتے ہوئے شہریوں سے مدد مانگ لی ۔

ٹوئٹر پر حمل کاشانی نے لکھا کہ ’ انگریزی جریدے ڈیلی ٹائمز میں چھپنے والے ایک آرٹیکل میں لگی میری ایک تصویر کو گوادر کے حملہ آور کیساتھ جوڑا جارہاہے ، میری حامد میر، جبران ناصر، ڈیلی ٹائمز،ظہور بلیدی،اختر مینگل وغیرہ تمام دوستوں سے درخواست ہے کہ مہربانی کرکے یہ لنک رپورٹ کریں‘۔

حمل کاشانی کی اس پوسٹ پر سوشل میڈیا صارفین نے بھی اپنے اپنے تبصرے کیے اور بیشتر افراد نے اس مہم کو افسوسناک قراردیا، کچھ لوگوں نے انہیں ایسے تمام سوشل میڈیا پیجز رپورٹ کرنے کی تجویز دی تو کچھ لوگوں نے ان کی حفاظت کے لیے بھی دعا کی اور مشکل وقت جلد ختم ہونے کی دعا دی۔

مزید : قومی