میاں چنوں: مبینہ پولیس مقابلہ‘ نوجوان ہلاک‘ ایک گرفتار‘ ورثا کا مظاہرہ‘ نعرے بازی

میاں چنوں: مبینہ پولیس مقابلہ‘ نوجوان ہلاک‘ ایک گرفتار‘ ورثا کا مظاہرہ‘ ...

  

میاں چنوں،محسن وال(نمائندہ پاکستان،نامہ نگار) ایس ایچ اوتھانہ صدر میاں چنوں کی سربراہی میں پولیس نے جعلی مقابلہ میں ایک اور نوجوان مارڈالاتنویر لک نامی نوجوان اپنے ساتھیوں کے ساتھ نیشنل ہائی وے پر واقع ہوٹل سے کھانا کھاکر کار واپس آرہا تھا کہ پولیس تھانہ صدرنے نیشنل ہائی وے پر کار کوروکا تو کار سواروں نے کار بھگا لی پولیس نے کار پر(بقیہ نمبر34صفحہ7پر)

سیدھی فائرنگ کردی فائرنگ کے نتیجے میں تنویر لک نامی نوجوان موقعہ پر دم توڑ گیا پولیس نے اپنے آپ کو بچانے کے لئے تنویر لک کے ساتھی کو گرفتار کر کے فرضی پسٹل برا?مدگی ڈال کر پولیس پر فائرنگ کا مقدمہ درج کرلیا اور کار کو پانے قبضہ میں لے لیا جعلی پولیس مقابلہ میں پولیس کے ہاتھوں قتل ہونے والے تنویر لک کے ورثاء کا نیشنل ہائی وے روڈ بلاک کرکے ایس ایچ اوتھانہ صدر میاں چنوں اور ڈی ایس پی میاں چنوں کے خلاف احتجاج تفصیل کے مطابق گزشتہ سے پیوستہ رات تنویر لک سکنہ111پندرہ ایل کارہائشی اپنے ساتھی رمضان سمیت نیشنل ہائی وے پر واقع خان محمد قصائی ہوٹل سے کھانا کھا کر واپس آرہا تھا نیشنل ہائی وے پر پھاٹک 135سولہ ایل کے قریب ایس ایچ اوتھانہ صدر میاں چنوں نجف عباس کی سربراہی میں پولیس نے کار کوروکا،کارسواروں نے کار بھگا لی جس پر پولیس نے گاڑی پر سیدھی فائرنگ کردی پولیس کی فائرنگ کے نتیجے میں چک نمبر111پندرہ ایل کا رہائشی تنویر لک نامی نوجوان کار سے نکل کر بھاگا تو پولیس کے شیر جوانوں اسکو فائر مار کر قتل کردیا اور اس کے ساتھی رمضان عرف فوجی کو گرفتار کر لیا اور فرضی پسٹل کی برآمدگی ڈال کر پولیس پر فائرنگ کا مقدمہ درج کر کے پولیس مقابلہ ظاہر کردیا تاکہ پولیس اہلکار نوجوان کے قتل کے مقدمہ کی کاروائی سے بچ سکیں،تھانہ صدر میاں چنوں کے اہلکار کارکو بھی اپنے قبضہ میں لے کر تھانہ میں لے آئے پولیس کی فائرنگ سے قتل ہونے والے نوجوان تنویر لک کے ورثاء کے مطابق تنویر لک اپنے ساتھیوں کے ساتھ کھانا کھا کر واپس آہا تھا تو تھانہ صدر پولیس کے ملازمین نے کار پر سیدھی فائرنگ کی فائرنگ کے نشانات گاڑی پر واضح نظر آرہے ہیں مقتول کے ورثائنے ایس ایچ اوتھانہ صدر میاں چنوں نجف عباس سیال اور ڈی ایس پی میاں چنوں شبیر وڑائچ کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے نیشنل ہائی وے روڈ بلاک کر کے مظاہرین نے کہا کہ ایس ایچ اوتھانہ صدر میاں چنوں ڈاکوء وں کو پکڑنے کی بجائے بے گناہ لوگوں کو قتل کررہا ہے اور جعلی پولیس مقابلوں میں کافی شہرت رکھتا ہے ہماری وزیر اعلی پنجاب اور ا?ئی جی پنجاب سے اپیل ہے کہ وہ اس جعلی پولیس مقابلے کی جوڈیشل انکوائری کروائیں اور ایس ایچ اوتھانہ صدر نجف عباس سیال کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کرتے ہوئے اس کو گرفتار کریں ۔ دریں اثناء میاں چنوں سے نمائندہ پاکستان کے مطابق میاں چنوں پولیس تھانہ صدر نے بتایا کہ ملزم رمضان دو ساتھیوں کے ہمراہ جا رہا تھا. جسکو پولیس نے 111 پنررہ ایل کے قریب روکنے کی کوشش کی تو ملزمان نے گاڑی سمیت بھاگنے نکلے اور گاڑی کا پیچھا کرتے ہوئے پولیس نے ملز مان کو 135 سولہ ایل والے پھاٹک بند ہونے پرپکڑنے کی کوشش کی تو ملز مان کی کار تیز رفتاری کے باعث کھمبے سے جا ٹکرائی. بعدازاں ملزم کی جانب سے فائرنگ کی گئی.اسی دوران پولیس نے ملزم کو گرفتار کرلیا جبکہ دو ملزمان فرار ہوگئے. گرفتار ملزم سے پسٹل اور گاڑی کو برآمد کرکے مقدمہ درج کرلیا گیا ہے صبح پولیس کو,اطلاع ملی کے ایک شخص مردہ حالت میں 135 والے پھاٹک کے قریب پڑا ہے جب پولیس موقع پر پہنچی تو وہ ملزمان کا ایک ساتھی تنویر رات فائرنگ کے تبادے میں ہلاک ہو گیا تھا جس ہر ملزمان کے ورثا نے موٹر وے روڈ کو ایک گھنٹہ کے لیے ٹریفک کے لیے بلاک کر دیا تھا جو بعد میں کھول دی گی۔

مطالبہ

نعرے بازی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -