جنوبی پنجاب میں 181فوڈ پوائنٹس کو نوٹس‘بھاری جرمانے

  جنوبی پنجاب میں 181فوڈ پوائنٹس کو نوٹس‘بھاری جرمانے

  

ملتان (سٹاف رپورٹر)جنوبی پنجاب میں فوڈ اتھارٹی نے 181فوڈ پوائنٹس کو نوٹس‘35کو جرمانے کردئیے‘1245لیٹر بیوریجز،424لیٹر غیر معیاری دودھ،80کلو مصالحہ جات موقع پر تلف کئے گئے‘ مٹھائی میں زہریلے کیمیکل کے استعمال، مکڑیوں کے جال اورگندگی پر سوئیٹس پروڈکشن یونٹ سربمہر کر دیا گیا۔تفصیلات کے مطابق (بقیہ نمبر35صفحہ6پر)

فوڈ سیفٹی ٹیمز نے پورے جنوبی پنجاب میں کارروائیاں کرتے ہوئے وہاڑی میں واقع گنج شکر پروڈکشن یونٹ کو سابقہ ہدایات پر عمل نہ کرنے،مٹھائی میں کیمیکل کے استعمال،پراسیسنگ ایریا میں مکڑیوں کے جالے لگے ہونے اور ناقص صفائی پر سوئیٹس پروڈکشن یونٹ کو سربمہر کیا۔اسی طرح ملتان میں واقع شاداب آئس فیکٹری کو آلودہ فلنگ پائپ کے استعمال،واٹر تجزیہ رپورٹ نہ ہونے،حشرات کی روک تھام کے نامناسب انتظامات ہونے پر10ہزار روپے،لودھراں میں داتا سوئیٹس اینڈ بیکرز پروڈکشن یونٹ کو ورکرز کے میڈیکل سرٹیفیکیٹس نہ ہونے پر،گندے فریزرز اور ناقص صفائی کے انتظامات پر 15ہزار روپے کے جرمانے عائد کیے گئے۔مزید برآں جنوبی پنجاب کے مختلف اضلاع میں کارروائی کرتے ہوئے ملتان ڈویژن میں 82فوڈ پوائنٹس کو وزٹ کیا اور68کو وارننگ نوٹسز جاری کیے۔اسی طرح بہاولپورڈویژن میں 80 شاپس کی چیکنگ کی گئی اور69فوڈ پوائنٹس کو اصلاحی نوٹسز جاری کیے جبکہ ڈی جی خان ڈویژن میں 47شاپس کی چیکنگ کرتے ہوئے33فوڈ پوائنٹس کو معمولی نقائص پر حتمی وارننگ نوٹسز جاری کیے۔حفظان صحت کے اصولوں کی خلاف ورزی کرنے پر ملتان ڈویژن میں 13فوڈپوائنٹس کو43,000روپے، بہاولپور ڈویژن میں 09شاپس کو63,500 روپے اور ڈی جی خان ڈویژن میں 13فوڈ یونٹس کومجموعی طورپر62,500 روپے کے جرمانے عائد کیے گئے۔اسی طرح دوران کاروائی انسپیکشن کرتے ہوئے مختلف اضلاع سے 1245لیٹر بیوریجز،424لیٹر غیر معیاری دودھ،120کلو غیر معیاری آٹا،80کلو مصالحہ جات،10کلو رنگدار پاپڑ اور03کلو ناقص مٹھائی کو تلف کیا گیا۔

جرمانے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -