متحدہ علماء محاذ کے تحت جمعہ کو ”یوم ارض فلسطین“منایا گیا

  متحدہ علماء محاذ کے تحت جمعہ کو ”یوم ارض فلسطین“منایا گیا

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)متحدہ علماء محاذ پاکستان کے زیر اہتمام 15تا22مئی ہفتہ القدس منائے جانے کا آغاز آج جمعہ سے کردیا گیا ہے اس سلسلے میں مختلف مکاتب فکر کے جید علماء مشائخ نے یوم ارض فلسطین پر تفصیلی روشنی ڈالی اور ناجائز اسرائیلی ریاست کے قیام کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے مسلم حکمرانوں کی غیرت ایمانی کیلئے کھلا چیلنج قرار دیا علماء نے جمعہ کے خطبات اور متحدہ علماء محاذ کے مرکزی سیکریٹریٹ گلشن اقبال میں منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اسرائیل اپنے ناپاک وجود کے قیام14مئی1948سے آج تک فلسطینی مسلمانوں پرانسانیت سوز وحشیانہ مظالم اور قبلہ اول بیت المقدس پر غاصبانہ قبضہ روا رکھے ہوئے ہے اسرائیلی ریاست تسلیم نہیں کرتے، مسلم حکمران اسرائیلی ناجائز ریاست کو مسترد کردیں،اسرائیل سب سے بڑا خطرناک کورونا ہے، مسلم حکمران بیت المقدس کی آزادی کیلئے مشترکہ اسلامی فوج تشکیل دیں اسرائیل کے خلاف مظلوم فلسطینی مسلمانوں کے شانہ بشانہ ہیں، علماء نے فلسطین و کشمیر اور بھارت میں مسلمانوں پر ہونے والے وحشیانہ مظالم پر اقوام متحدہ اور حقوق انسانی کے عالمی اداروں کی مجرمانہ خاموشی جانبدارانہ پالیسی کی شدید مذمت کرتے ہوئے عالمی استعمار کے خلاف مسلم امہ کے اتحاد کی ضرورت پر زور دیا اجتماعات سے مولانا انتظار الحق تھانوی،علامہ مرزا یوسف حسین، مولانا قاری اللہ داد، مولانا محمد امین انصاری،علامہ عبد الخالق فریدی، علامہ قاضی احمد نورانی صدیقی،علامہ سید عقیل انجم،مولانا ڈاکٹر سعید احمد صدیقی،مفتی محمد بخاری، علامہ شاہدین اشرفی، علامہ روشن دین الر شیدی،علامہ علی کرار نقوی،علامہ قرۃ العین عابدی،علامہ سید سجاد شبیر رضوی، علامہ شوکت مغل،مولانا منظر الحق تھانوی، علامہ مرتضیٰ خان رحمانی، علامہ ڈاکٹر شاہ فیروز الدین رحمانی، مفتی وجیہہ الدین،مفتی منیب الرحمن بنوری، مفتی شبیر احمد،مفتی اکبر شاہ،مفتی محمداسلام،علامہ غلام مصطفی رحمانی، علامہ وحید نورانی، علامہ حفیظ اللہ ہادیہ صدیقی، علامہ عبد اللہ جونا گڑھی، سمیت کثیر تعداد میں علماء نے خطاب کیا

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -