سابق چئیرپرسن بینظیر انکم سپورٹ پروگرام فرزانہ راجہ نے قومی خزانے کو کتنا نقصان پہنچایا؟ نیب کا بڑادعویٰ سامنے آگیا

سابق چئیرپرسن بینظیر انکم سپورٹ پروگرام فرزانہ راجہ نے قومی خزانے کو کتنا ...
سابق چئیرپرسن بینظیر انکم سپورٹ پروگرام فرزانہ راجہ نے قومی خزانے کو کتنا نقصان پہنچایا؟ نیب کا بڑادعویٰ سامنے آگیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)نیب نے سابق چئیرپرسن بینظیر انکم سپورٹ پروگرام فرزانہ راجہ پر غیر قانونی ٹھیکوں کا الزام عائد کرتے ہوئے دعویٰ کیاہے کہ  فرزانہ راجہ نے قومی خزانے کو 50 کروڑ سے زیادہ کا نقصان پہنچایا ۔نجی ٹی وی ہم نیوز کا کہنا ہے کہ نیب کے مطابق فزانہ راجہ نے 4اشتہاری کمپنیوں کو خلاف قانون ٹھیکے دیئے ، نیب کے الزامات کا جائزہ لینے کے بعد احتساب عدالت نے بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کرپشن ریفرنس باقاعدہ سماعت کیلیےمقررکرلیا گیا۔ 

خیال رہے کہ رواں سال مارچ کے اوائل میں ابے نظیر انکم سپورٹ پروگرام میں مبینہ کرپشن کیخلاف ریفرنس اسلام آباد کی احتساب عدالت میں دائر کیاگیا جس میں سابق چیئرمین بینظیر انکم سپورٹ پروگرام فرزانہ راجہ سمیت دیگر 19 ملزمان کو فریق بنایا گیا ۔ریفرنس اسکروٹنی کیلئے رجسٹرار آفس بھجوا دیا گیا ہے، یہ سماعت کیلئے منظور ہونے کے بعداب  احتساب عدالت کے جج ریفرنس پر سماعت کرینگے، بینظیر انکم سپورٹ پروگرام سے فائدہ اٹھانے والےسرکاری افسران کیخلاف نیب راولپنڈی نے کارروائی آگے بڑھاتے ہوئے پروگرام میں مبینہ کرپشن کیخلاف بتیس والیم پرمشتمل ریفرنس میں انیس ملزمان کو فریق بنایا گیا ہے۔ 

مزید :

قومی -جرم و انصاف -