بیوٹی سیلون اور پارلرز میں بیک وقت کتنے گاہک بٹھانے کی اجازت ہو گی؟نئے قواعد وضوابط کی وضاحت جاری

بیوٹی سیلون اور پارلرز میں بیک وقت کتنے گاہک بٹھانے کی اجازت ہو گی؟نئے قواعد ...
بیوٹی سیلون اور پارلرز میں بیک وقت کتنے گاہک بٹھانے کی اجازت ہو گی؟نئے قواعد وضوابط کی وضاحت جاری

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)بیوٹی سیلون اور پارلرز میں بیک وقت کتنے گاہک بٹھانے کی اجازت ہو گی؟محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کئیر نے نئے قواعد وضوابط کی وضاحت جاری کردیئے۔

ترجمان پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کئیر کے مطابق بیوٹی سیلون اور پارلرز کے سروس ایریا میں ایک ہی گاہک کو بٹھایا جا سکے گا،بال کاٹنے، مساج، میک اپ وغیرہ الگ الگ ہونے کی صورت میں ایک جگہ ایک کسٹمر کو سروس دی جائے۔سیلون کی گنجائش کے مطابق صرف 50 فی صد گاہکوں کو اندر آنے دیا جائے،اگر گنجائش 10 افراد کی ہو تو صرف 5 افراد کو اندر آنے دیا جائے۔ ترجمان کے مطابق انتظار گاہ میں ایک گاہک سے زیادہ افراد نہ بٹھائے جائیں،گاہک کو پندرہ منٹ سے زیادہ انتظار نہ کروایا جائے،گاہکوں کو ٹیلیفون کے ذریعے وقت دینے کی حکمت عملی اپنا کر رش سے بچا جائے،بیوٹی سیلون کے لیے جاری کیے گئے تمام ایس او پیز پر عمل درآمد یقینی بنایا جائے۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -