” میں تمہیں خبردار کر رہی ہوں ، ہمیں منہ کھولنے پر مجبور نہ کرو “ شریں مزاری کی ڈی جی آئی ایس پی آر کو دھمکی 

” میں تمہیں خبردار کر رہی ہوں ، ہمیں منہ کھولنے پر مجبور نہ کرو “ شریں مزاری ...
” میں تمہیں خبردار کر رہی ہوں ، ہمیں منہ کھولنے پر مجبور نہ کرو “ شریں مزاری کی ڈی جی آئی ایس پی آر کو دھمکی 

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )پاکستان تحریک انصاف کی سینئر رہنما شیریں مزاری صحافی احمد قریشی کی جانب سے عمران خان پر اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات استوار کرنے کی رضامندی کے الزامات سے بھر پور ٹویٹ پر آگ بگولہ ہو گئیں اور صحافی کو جواب دیتے ہوئے سخت الفاظ کا استعمال کیا جبکہ ساتھ ہی انہوں نے اپنی گفتگو میں ڈی جی آئی ایس پی کو بھی مخاطب کیا اور دبے الفاظ میں دھمکی دیتے ہوئے کہا کہ ”میں تمہیں خبردار کر رہی ہوں کہ ہمیں ان معاملات پر منہ کھولنے پر مجبور نہ کرو جن پر ہم خاموشی اختیار کیئے ہوئے ہیں“۔

تفصیلات کے مطابق یہ سارامعاملہ احمد قریشی نامی صحافی کے ایک تویٹ سے شروع ہو اس جس میں انہوں نے سابق وزیراعظم عمران خان کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ” بطور وزیراعظم عمران خان اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات استوار کرنے کیلئے تیارتھے جس کیلئے انہوں نے ذاتی اور گھریلو تعلقات کا سہارا بھی لیا ، حالات اس وقت بدلے جب ان کی حکومت ناقص گورننس کے باعث غیر مستحکم ہو گئی ، ممکنہ طور پر اس سے متعلق مزید معلومات سامنے آ سکتی ہیں“ ۔

شیریں مزاری صحافی کے ٹویٹر پر غصے سے بھر گئیں اور ٹویٹر پر جواب دیتے ہوئے کہا کہ ” یہ بکوا س کر رہاہے ، چونکہ ہمیں معلوم ہے کہ وہ کس کیلئے کام کرتاہے ، تو سوال یہ ہے کہ اسے عمران خان کی خارجہ پالیسی کو نشانہ بنانے کیلئے کون فیڈنگ کروا رہاہے ، اس دوران عمران خان نے تنقید کی کیونکہ احمد قریشی جیسے بوائز چاہتے تھے کہ پاکستان اسرائیل کو تسلیم کرے ، عمران خان نے پوری طرح اسرائیل کو عوامی سطح پر شدید تنقید کا نشانہ بنایا “۔

شیریں مزاری نے اپنی بات کو مزید آگے بڑھاتے ہوئے کہا کہ ” عمران خان نے اسرائیل کی ریاستی دہشتگردی کی مسلسل عوامی سطح پر مذمت کی ، احمد قریشی کو چاہیے کہ وہ حقائق کا مطالعہ کریں “۔

پی ٹی آئی رہنما کا مزید کہناتھا کہ ”ہم بہت سے حساس معاملات پر خاموش ہیں لیکن ہمیں کونے میں نہ دھکیلا جائے ، ہم ایک سال سے دیکھ رہے ہیں کہ یہ شخص عمران خان اور اس کی آزاد خارجہ پالیسی کو سنگین الزامات لگا کر نشانہ بنا رہاہے ،جواب اس لیے نہیں دیا کیونکہ اس کے پاس کوئی خاصیت نہیں ہے ۔“اپنے اس ٹویٹ میں شریں مزاری نے ڈی جی آئی ایس پی آر کو مینشن کیا اور کہا کہ ” ہمیں مجبور نہ کرو“۔

ان کا کہناتھا کہ احمد قریشی کے دورہ اسرائیل کے باعث ” نیوٹرلز “ کو تنقید کا سامنا ہے ،تو اپنے لڑکوں کے زریعے بے بنیادا لزامات لگوا کر عمران خان کو نشانہ بنا رہے ہیں، میں دوبارہ دہرا رہی ہوں کہ ہمیں منہ کھولنے پر مجبور نہ کیا جائے ، ان معاملات پر جن پر ہم خاموش بیٹھے ہیں“۔

انہوں نے کہا کہ ” ریکارڈ کیلئے دو ممالک ایسے ہیں جنہوں نے عمران خان کو سازش کے ذریعے ہٹائے جانے پر خوشی منائی اور وہ اسرائیل اور بھارت ہیں ، جو لوگ اسلام کو ٹارگٹ کر رہے ہیں انہوں نے بھی عمران خان کے جان پر جشن منایا ۔“

مزید :

قومی -