جی ٹونٹی اجلاس : عالمی رہنما آسٹریلیا پہنچ گئے

جی ٹونٹی اجلاس : عالمی رہنما آسٹریلیا پہنچ گئے

  

برسبین(آن لائن)عالمی رہنما جی 20کے ایک خصوصی اجلاس میں شرکت کے لیے ہفتے کو آسٹریلیا کے شہر برسبین میں جمع ہوگئے۔ ان کی بات چیت کا موضوع گروپ کے رکن ملکوں کی مجموعی قومی پیداوار میں اضافے کی حکمتِ عملی پر غور ہے۔سربراہی اجلاس کے موقع پر سلامتی کے غیرمعمولی انتظامات کے تحت قریب سات ہزار سکیورٹی اہلکار تعینات کیے گئے ہیں۔غیرملکی خبررساں ادار ے کے مطابق یہ عالمی رہنما ان 20 ملکوں کی مجموعی پیداوار کو 2018ء تک دو فیصد تک بڑھانا چاہتے ہیں جو حالیہ پیش گوئیوں کے مقابلے میں زیادہ ہے۔ آج ہفتے کو برسبین میں G20 سمٹ میں مشاورت کا موضوع اسی ہدف کے حصول کے لیے حکمت عملی پر غور ہے۔اس اجلاس میں شرکت کے لیے آسٹریلیا کی ریاست کوئنز لینڈ کے دارالحکومت برسبین میں گزشتہ رات گئے پہنچنے والے آخری عالمی رہنماو¿ں میں امریکی صدر باراک اوباما، جرمن چانسلر انگیلا میرکل اور چینی صدر شی جِن پِنگ شامل تھے۔وہ اس اجلاس میں روس، جاپان، برازیل، انڈونیشیا، برطانیہ، سعودی عرب، ترکی، جنوبی افریقہ اور جی 20 میں شامل دیگر ملکوں کے اپنے ہم منصب رہنماو¿ں کے ساتھ شرکت کر رہے ہیں۔

یہ عالمی رہنما ریاستی پارلیمنٹ ہاو¿س میں ملاقات کر رہے ہیں جبکہ برسبین کے کنوینشن سینٹر میں اجلاس کے آغاز سے قبل رکن ملکوں کے وزرائے خزانہ کا ایک علیحدہ اجلاس بھی شروع ہو چکا ہے۔امریکی صدر باراک اوباما کی جانب سے یونیورسٹی آف کوئنز لینڈ میں ایک خطاب بھی طے ہے۔ جہاں عالمی رہنما معیشت کو پٹری پر ڈالنے کی ا±میدیں لیے برسبین پہنچے ہیں، وہیں پر ماحولیاتی، روس مخالف اور سرمایہ دارانہ نظام کی مخالفت کرنے والوں نے بھی اس شہر کا رخ کیا ہے۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -