مقدمہ قتل میں جرم ثابت ہونے پر ایک ملزم کو عمر قید، 5 شریک ملزمان بری

مقدمہ قتل میں جرم ثابت ہونے پر ایک ملزم کو عمر قید، 5 شریک ملزمان بری

  

لاہور (نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج ملک علی ذوالقرنین اعوان نے قتل کے مقدمہ کا فیصلہ سناتے ہوئے جرم ثابت ہونے پر ایک ملزم کو عمر قید او ر3 لاکھ روپے ہرجانے کی سزا کا حکم دیا ہے جبکہ 5 شریک ملزمان کو شک کا فائدہ دیتے ہوئے بری کر دیا ہے استغاثہ کے مطابق ملزمان وحید عرف مانا ،شاہد ،سعید ،رﺅف ،جاوید اور شہزاد نے 13ستمبر 2008کو دکان کے سامنے بیٹھنے پر طیش میں آکر قینچی کے وار کر کے راحت محمود کو قتل کر دیا تھا جس کا مقدمہ تھانہ گرین ٹاﺅن پولیس نے مقتول کے بھائی شفیق کی مدعیت میں درج کیا اور چالان عدالت میں پیش کر دیا تھا گزشتہ روز فاضل عدالت نے وکلاءکے دلائل اور گواہان کے بیانات سننے کے بعد جرم ثانت ہونے پر ملزم وحید عرف مانا کو عمر قید اور تین لاکھ روپے ہرجانے کی سزاءکا حکم دیا جبکہ عدم آدائیگی پر ملزم کو مزید چھ ماہ قید میں رکھنے کے بھی احکامات جاری کئے ہیں فاضل عدالت نے شریک پانچ ملزمان کو جرم ثابت نہ ہونے پر مقدمہ سے بری کر دیا ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -