ہیکروں سے ہمیشہ کے لیے نجات،سائنسدانوں نے کامیابی حاصل کرلی

ہیکروں سے ہمیشہ کے لیے نجات،سائنسدانوں نے کامیابی حاصل کرلی
ہیکروں سے ہمیشہ کے لیے نجات،سائنسدانوں نے کامیابی حاصل کرلی

  

واشنگٹن (نیوز ڈیسک) دور جدید میں کمپیوٹر زندگی کا لازمی حصہ بن چکا ہے لیکن یہ بھی سچ ہے کہ کمپیوٹر وائرس بھی ہر کمپیوٹر صارف کیلئے ایک ڈراﺅنی حقیقت بن چکا ہے۔ ائے روز کوئی نئے سے نیا وائرس حملہ آور ہوکر ہماری نیند اڑاتا ہے مگر اب ایک جدید ترین سائنسی تخلیق نے یہ امید پیدا کردی ہے کہ وائرس کا مسئلہ ہمیشہ کیلئے حل ہونے والا ہے۔

امریکہ کی یونیورسٹی آف یوٹاہ کے کمپیوٹر سائنسدان ایرک ایڈ نے اس نئے سافٹ ویئر کی وضاحت کرتے ہوئے بتایا ہے کہ یہ ایک ایسا کمپیوٹر پروگرام ہے جو ہمہ وقت نئے وائرس کو تلاش کرے گا اور کسی بھی وائرس سے فائلوں کو پہنچنے والے نقصان کو بھی خود ہی درست کردے گا۔ روایتی اینٹی وائرس سافٹ ویئر صرف اس وائرس کو پکڑسکتے ہیں جو ان کی لسٹ میں موجود ہے اور کوئی نیا وائرس آنے پر یہ بے بس ہوجاتے ہیں۔ اس کے برعکس A3 نامی نئے سافٹ ویئر میں یہ صلاحیت ہے کہ یہ ہر اس پروگرام کا تجزیہ کرے گا جو کہ وائرس ثابت ہوسکتا ہے اور یوں کسی بھی نئے وائرس کو حملہ آور ہونے سے پہلے پکڑے گا اور اگر کوئی وائرس نقصان پہنچائے گا بھی تو یہ اسے بالآخر پکڑنے کے بعد خرابی کو بھی خود ہی دور کردے گا۔ فی الحال اسے لینکس آپریٹنگ سسٹم استعمال کرنے والے کاروباری اور عسکری کمپیوٹروں کیلئے متعارف کروایا گیا ہے لیکن پروفیسر ایرک نے امید ظاہر کی ہے کہ جلد ہی عام گھریلو کمپیوٹر بھی اس کی بدولت وائرس سے ہمیشہ کیلئے نجات پالیں گے۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی -