انسانی مثانے کے لیے اخروٹ کے حیرت انگیزفوائد

انسانی مثانے کے لیے اخروٹ کے حیرت انگیزفوائد
انسانی مثانے کے لیے اخروٹ کے حیرت انگیزفوائد

  

نیویارک (نیوز ڈیسک) پراسٹیٹ کینسر مردوں میں پائی جانے والی بیماری ہے جو ہر سال لاکھوں کی تعداد میں اموات کا باعث بنتی ہے اور ایک نئی تحقیق میں انکشاف ہوا ہے کہ روزانہ مٹھی بھر اخروٹ کھانا اس سے بچنے کا بہترین نسخہ ہے۔ اس کینسر کا آغاز پراسٹیٹ گلینڈ سے ہوتا ہے جو کہ مردانہ نظام افزائش نسل کا حصہ ہے اور اخروٹ کے سائز کا یہ گلینڈ پیشاب کی نالی کے گرد واقع ہوتا ہے۔

یونیورسٹی آف کیلیفورنیا کے ڈاکٹر پال ڈیوس کہتے ہیں کہ اخروٹ کو سپر فوڈ کہا جاسکتا ہے جو پراسٹیٹ کینسر کے علاوہ ذیا بیطس، دل کی بیماریوں اور بریسٹ کینسر سے بھی تحفظ فراہم کرتا ہے۔ سائنسی جریدے ”جرنل آف میڈیشنل فوڈ“ میں شائع ہونے والی تحقیق میں بتایا گیاہے کہ اخروٹ کولیسٹرول کو کم کرتا ہے اور انسولین ہارمون کیلئے حساسیت بھی بڑھاتا ہے جس کی وجہ سے ذیا بیطس کا خطرہ کم ہوجاتا ہے۔ اخروٹ میں اومیگا تھری فیٹی ایسڈ پایا جاتا ہے لیکن پراسٹیٹ کینسر سے بچانے میں اس کے دیگر اجزاءبھی اومیگا تھری کے ساتھ مل کر کام کرتے ہیں جن کی تفصیلی معلومات تاحال سائنسدانوں کو دستیاب نہیں ہوسکیں، مگر یہ طے ہے کہ یہ اجزاءکینسر سے تحفظ فراہم کرتے ہیں۔ اخروٹ کے یہ فوائد اسے براہ راست کھانے کے علاوہ دیگر غذاﺅں میں ملا کر کھانے سے بھی حاصل ہوسکتے ہیں۔

مزید :

تعلیم و صحت -