23دسمبر ،سعودی حکومت نے مردوں کو خبردار کر دیا

23دسمبر ،سعودی حکومت نے مردوں کو خبردار کر دیا
23دسمبر ،سعودی حکومت نے مردوں کو خبردار کر دیا

  

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب میں گھریلو تشدد کے تدراک کیلئے نیا قانون یکم ربیع الاول سے نافذ کیا جارہا ہے۔ خبر رساں ویب سائٹ ”عرب نیوز“ کے مطابق قانون کے مسودے کا جائزہ لیا جاچکا ہے اور اس کے متن کو بھی حتمی شکل دے دی گئی ہے۔ اس قانون میں خواتین کے خلاف تشدد پر بھرپور توجہ دی گئی ہے۔

قانون میں پولیس کو پابند بنایا گیا ہے کہ وہ گھریلو تشدد کی شکایت، چاہے وہ فون کے ذریعے موصول ہو، پر کسی پیشگی شرط کے بغیر حرکت میں آئے۔

یہ قانون بین الاقوامی قوانین اور معاہدوں سے ہم آہنگ ہے اور اس میں یقینی بنایا گیا ہے کہ متاثرین گھریلو شدد کو مدد، علاج، رہائش اور سماجی، نفسیاتی اور جسمانی صحت کی سہولیات تک رسائی فراہم کی جائے۔ قانون کے تحت گھریلو تشدد کرنے والوں کو سزاﺅں اور پابندیوں کا سامنا کرنا ہوگا جبکہ متاثرین کا نام صیغہ راز میں رکھا جائے گا۔

مزید :

انسانی حقوق -