ٹوکن ٹیکس کی عدم ادائیگی‘ ہزاروں سرکاری‘ کمرشل‘ نجی گاڑیاں ڈیفالٹر قرار

ٹوکن ٹیکس کی عدم ادائیگی‘ ہزاروں سرکاری‘ کمرشل‘ نجی گاڑیاں ڈیفالٹر قرار

  



ملتان(نیوز رپورٹر) ڈائریکٹر ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن ملتان عبداللہ خان جلبانی نے ٹوکن ٹیکس کی عدم ادائیگی پر ہزاروں نجی سرکاری اور کمرشل گاڑیوں کو ڈیفالٹر قرار دیتے ہوئے سسٹم میں بلاک کر دینے کے احکامات جاری کردئیے ہیں جس پر فوری عملدرآمد کرتے ہوئے پہلے مرحلہ میں شارٹ ٹوکن ٹیکس کی حامل 4 ہزار سے زائد نجی اور کمرشل گاڑیوں کو بلاک کردیا گیا ہے ذرائع کے مطابق صرف ملتان شہر میں رجسٹرڈ ہونیوالی 15 ہزار سے زائد گاڑیاں ٹوکن ڈیفالٹر ہیں جنہیں روزانہ کی بنیاد پر بلاک کیا جارہا ہے ان(بقیہ نمبر62صفحہ12پر)

ڈیفالٹر گاڑیوں میں زیادہ تر نجی اور کمرشل گاڑیاں شامل ہیں جبکہ سرکاری ڈیفالٹر گاڑیوں میں پہلی پوزیشن پنجاب پولیس ڈیپارٹمنٹ کی 160 گاڑیاں ہیں ویسٹ منیجمنٹ کی 30 گاڑیاں ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ کی 12 گاڑیاں ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ کی 15 گاڑیاں کمشنر افس کی 15 گاڑیاں نشتر ہسپتال اور ڈینٹل کالج کی 9 گاڑیاں فیڈرل بورڈ آف ریونیو کی 6 گاڑیاں کسٹم کلکٹریٹ کی 4 گاڑیاں جبکہ ن لیگ کے دور حکومت میں ییلو کیپ اور گرین کیپ سکیم کی 3 ہزار گاڑیاں ٹوکن ٹیکس ڈیفالٹر ہیں ایکسائز حکام کے مطابق مذکورہ 15 ہزار گاڑیاں سسٹم میں بلاک ہونے اور ایکسائز و ٹریفک ڈیپارٹمنٹ کے آن لائن نظام سے خارج ہونے کے باعث مشکوک قرار پائی جائیں گی اور صوبہ بھر میں کہیں بھی چیکنگ میں آنے پر بند ہوسکتی ہیں اور مالکان کے لئیے مشکلات کا باعث بن سکتی ہیں۔

ڈیفالٹر

مزید : صفحہ اول /ملتان صفحہ آخر