انتظامیہ شہریوں کو ریلیف دلانے میں ناکام‘ مہنگائی نے چیخیں نکلوادیں

انتظامیہ شہریوں کو ریلیف دلانے میں ناکام‘ مہنگائی نے چیخیں نکلوادیں

  



ملتان (نیوز رپورٹر) جمعہ بازاروں میں شہریوں کو ریلیف دینے بارے انتظامیہ کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے ہیں گرانفروش مافیا شہریوں کی جیبیں صاف کرنے میں مصروف رہا پاکستان سروے میں صارفین نے انتظامیہ اور مارکیٹ کمیٹی کے اہلکاروں کو سخت ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ ان سستے بازاروں میں بھی چیک اینڈ بیلنس کا نظام نہ ہونے کے باعث دکاندار گرانفروشی اور درجہ دوم اشیاء درجہ اول کے بھاو بیچنے میں مصروف ہیں صارفین محمد اسلم بھٹی، شہزاد، محمد بلال، لیاقت حسین، صاحب(بقیہ نمبر63صفحہ12پر)

خاتون، محمد عظیم، لیاقت علی اور میاں عباس احمد نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ اشیائے خورونوش کی قیمتوں میں دکانداروں کی جانب سے خود ساختہ اضافے سے واضح ہوتا ہے کہ حکومتی اداروں کی مارکیٹ میں رٹ نہیں رہی جس کے باعث گرانفروش مافیا شہریوں کو دونوں ہاتھوں سے لوٹنے میں مصروف ایک صارف محمد بلال نے بتایا کہ جمعہ بازار میں ٹماٹر کے نرخ 200 روپے کلو بتائے گئے ہیں لیکن 240 روپے فروخت کئیے جارہے ہیں میانوالی کی رہائشی صاحب خاتون نے کہا کہ عمران خان پاکستان کے بیرونی معاملات کے ساتھ ملک کے پسے ہوئے طبقے پر توجہ کرے جس طبقہ نے اسے اقتدار کے منصب پر فائز کیا ہے وہ اس مہنگائی کے متحمل نہیں ہوسکتا حکومت ملک میں اشیائے خورونوش سمیت بنیادی ضروریات زندگی کو فوری طور پر کنٹرول کرے اور ان کی قیمتوں کو مستحکم کرنے کے لئیے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات اٹھائے جائیں اور گرانفروش مافیا سے آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے تاکہ عوام میں پھیلتی بے چینی میں کمی آسکے۔

مہنگائی

مزید : صفحہ اول /ملتان صفحہ آخر