جے یو آئی کا دھرنا کرسی کے لالچ کیلئے تھا،طفیل انجم

جے یو آئی کا دھرنا کرسی کے لالچ کیلئے تھا،طفیل انجم

  



رستم(نمائندہ پاکستان) تحریک انصاف کے ممبر صوبائی اسمبلی طفیل انجم نے کہا ہے کہ جے یو آئی نے کرسی کی لالچ میں دھرنا شروع کیا تھا ملک کی بقاء کے لئے نہیں اس لئے ناکام واپس لوٹ گئے، مولانا کا پلان بی ملک بھر میں سڑکیں بند کرنا محض ایک ڈرامہ ہے، سڑکوں کو بند کرنے سے حکومت کو نہیں بلکہ عوام کو تکلیف دینا علماء کو زیب نہیں دیتا، دھرنا میں کنٹینر پر جید علماء کرام کو نشانہ بنایا گیا جو جے یو آئی پر ہمیشہ کے لئے سوالیہ نشان بن کر رہ گیا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے تحصیل بلڈنگ رستم کے دورے کے دوران صحافیوں سے گفتگو کے دوران کیا اس موقع پر پرسنل سیکرٹری محمد اسلام، سیاب خان اور دیگر کارکنان بھی موجود تھے۔ طفیل انجم نے کہا کہ گزشتہ ادوار میں حکمرانوں نے ملک و قوم کی دولت چوری کی لیکن ایک بھی ایسا ہسپتال نہیں بنایا کہ اس میں اپنا علاج کرا سکے۔ ترقیاتی منصوبوں کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ تحصیل بلڈنگ رستم کے لئے 30کروڑ منظور ہو ئے جو پی سی ون اور ٹینڈر کے بعد بلڈنگ پر مزید کا م کا آغاز ہو جائے گا،4 کروڑ روپے بجلی کی مد صرف یونین کونسل رستم کے لئے مختص کئے گئے ہے جہاں پر بجلی کا مسلہ ہے وہاں پر لگائیں جائینگے، 1کروڑ 50لاکھ روپے پبلک ہیلتھ کا فنڈ یو سی رستم کے رکھا گیا ہے جو وصول ہونے کے بعد ترقیاتی کاموں میں لگائیں جائینگے، مساجد میں سولر سسٹم لگانے کے لئے فند منظور ہو گئی ہے جس پر بہت جلد مساجد میں سولر سسٹم لگائیں جائینگے اس کے علاوہ کاٹلنگ اور بھیڑوچ روڈ بھی کام کا آغاز ہو گیا ہے جو تکمیل کے مراحل میں ہے۔ انہوں نے کہا کہ پی کے 49کے جتنے بھی مسائل ہے ترجیحاتی بنیادوں حل کرنے کے لئے کوشاں ہو تمام تر مسائل جلد از جلد حل جائیں گے۔

مزید : صفحہ اول /پشاورصفحہ آخر