"مولانا فضل الرحمان نے معاملات طے ہونے کے بعد اسلام آباد کا دھرنا ختم کیا" چوہدری پرویز الٰہی نے تہلکہ خیز انکشاف کردیا

"مولانا فضل الرحمان نے معاملات طے ہونے کے بعد اسلام آباد کا دھرنا ختم کیا" ...

  



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک، آئی این پی)مسلم لیگ (ق) کے مرکزی رہنما چوہدری پرویز الٰہی نے انکشاف کیا ہے کہ مولانا فضل الرحمان نے معاملات طے ہونے کے بعد اسلام آباد کا دھرنا ختم کیا۔جیو نیوز کے پروگرام ’جرگہ‘ میں میزبان سلیم صافی نے پرویز الٰہی سے سوال کیا کہ ’مولانا نے کہا تھا کہ یا تو وزیراعظم استعفیٰ دیں یا پھر استعفیٰ کے وزن کے برابر اگر کوئی چیز آجائے تو وہ بھی قبول ہے، یہ استعفے جیسی چیز کیا ہے؟‘اس کے جواب میں پرویز الٰہی نے مسکرا کر جواب دیا کہ مولانا نے ’انڈر اسٹینڈنگ‘ کے تحت اسلام آباد مارچ ختم کیا، معاملات طے ہونے کے بعد مولانا اسلام آباد سے روانہ ہوئے۔پرویز الٰہی نے مزید کہا کہ مولانا فضل الرحمان کو ہم نے جو دے کر بھیجا وہ ’امانت‘ ہے۔

سپیکر پنجاب اسمبلی پرویز الٰہی نے مسلم لیگ (ن) کے اراکین اسمبلی کی جانب سے قائمہ کمیٹیوں سے دیئے گئے استعفے منظور نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔نجی ٹی وی کے مطابق چوہدری پرویز الہٰی ن لیگ کے تحفظات پر وزیراعظم عمران خان کو آگاہ کریں گے اورلیگی رہنمائوں کے مستعفی ہونے سے پیدا ہونے والے مسائل پر بھی مشاورت کی جائے گی۔

نجی ٹی وی کے مطابق سپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الہٰی عنقریب ن لیگ کے رہنمائوں سے بھی ملاقات کریں گے جس میں ان کے تحفظات پر گفتگو کی جائے گی۔بتایا گیا ہے کہ پرویز الہٰی (ن) لیگ کے مطالبات کو جائز سمجھتے ہیں جبکہ لیگی اراکین بھی سپیکر پنجاب اسمبلی سے مسائل پر بات کرنے کے لئے مطمئن نظر آ رہے ہیں۔یاد رہے گزشتہ روز پی ایم ایل ن کے اراکین اسمبلی نے پنجاب حکومت پر دبائو بڑھانے کے لیے انتہائی قدم اٹھاتے ہوئے اسٹینڈنگ کمیٹیوں سے استعفی دے دیا تھا۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد