”آپ کیا سمجھتے ہیں کہ 2 وارم اپ میچز کھیل کر تیاریاں مکمل ہو گئیں؟“ ڈین جونز نے ٹیسٹ سیریز کیلئے قومی ٹیم کی تیاریوں پر سوالیہ نشان لگا دیا

”آپ کیا سمجھتے ہیں کہ 2 وارم اپ میچز کھیل کر تیاریاں مکمل ہو گئیں؟“ ڈین جونز ...
”آپ کیا سمجھتے ہیں کہ 2 وارم اپ میچز کھیل کر تیاریاں مکمل ہو گئیں؟“ ڈین جونز نے ٹیسٹ سیریز کیلئے قومی ٹیم کی تیاریوں پر سوالیہ نشان لگا دیا

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) سابق آسٹریلین کرکٹر ڈین جونز نے آسٹریلیا کیخلاف ٹیسٹ سیریز کیلئے پاکستان کی تیاریوں پر سوالیہ نشان لگاتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان کو ٹیسٹ سیریز میں پریکٹس کی کمی محسوس ہو گی۔

تفصیلات کے مطابق سابق آسٹریلوی ٹیسٹ کرکٹر نے اپنے کالم میں لکھا ہے کہ گرین شرٹس نے رواں سال جنوری کے بعد کوئی ٹیسٹ میچ نہیں کھیلا، کیا ایک 3 اور ایک 2 روزہ میچ کھیلنا مشکل سیریز کی تیاریوں کیلئے کافی ہوگا؟

ڈین جونز نے کہا برسبین اور ایڈیلیڈ کی وکٹوں پر باؤنس پرتھ سے بہت مختلف ہوگا اور پاکستان کے ناتجربہ کار فاسٹ باﺅلرز کو کنڈیشنز سے ہم آہنگی میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ایشین کرکٹرزکو مقامی ماحول سے مطابقت پیدا کرنے کیلئے کم از کم طویل فارمیٹ کے3 میچ درکار ہوتے ہیں، پاکستان کو ٹیسٹ سیریز میں پریکٹس کی کمی محسوس ہوگی۔

مزید : کھیل