شہرۂ آفاق شاعر اکبر الہٰ آبادی کا یومِ ولادت(16نومبر)

شہرۂ آفاق شاعر اکبر الہٰ آبادی کا یومِ ولادت(16نومبر)
شہرۂ آفاق شاعر اکبر الہٰ آبادی کا یومِ ولادت(16نومبر)

  

اکبرالہٰ آبادی:

اکبر الہٰ آبادی کا اصل نام سید اکبر حسین رضوی تھا۔ وہ 16نومبر 1846ءکو الہٰ آباد (اتر پردیش )میں پیدا ہوئے۔ برطانوی راج میں وہ اہم سرکاری عہدے پر فائز رہے اور ”خان بہادر“کا لقب پایا۔ اکبر الہٰ آبادی وہ پہلے شاعر ہیں جنہوں نے اردو شاعری میں انگریزی زبان کے الفاظ بھی استعمال کیے۔ ان کی شاعری غزل ، نظم اور رباعیات پر مشتمل ہے۔ اردو شاعری کا تذکرہ ان کے نام کے بغیر مکمل نہیں ہو سکتا۔ ان کی وفات ۹ستمبر 1921ءمیں ہوئی۔

نمونۂ کلام

آہ جو دل سے نکالی جائے گی 

کیا سمجھتے ہو کہ خالی جائے گی 

اس نزاکت پر یہ شمشیر جفا 

آپ سے کیوں کر سنبھالی جائے گی 

کیا غمِ دنیا کا ڈر مجھ رند کو 

اور اک بوتل چڑھا لی جائے گی 

شیخ کی دعوت میں مے کا کام کیا 

احتیاطاً کچھ منگا لی جائے گی 

یادِ ابرو میں ہے اکبرؔ محو یوں 

کب تری یہ کج خیالی جائے گی 

شاعر: اکبر الہٰ آبادی

Aah   Jo   Dil   Say   Nikaali   Jaaey   Gi

Kaya   Samjhtay   Ho   Keh  Khaali   Jaaey   Gi

 Iss   Nazakat   Par   Yeh   Shamsheer -e-Jafa

Aap   Say   Kiun   Kar   Sanbhaali   Jaaey   Gi

 Kaya   Gham -e-Dunya   Ka   Dar   Mujh   Rind   Ko

Aor    Ik   Botal   Charrha   Li    Jaaey   Gi

 Shaikh   Ki   Daawat   Men   May   Ka   Kaya   Kaam   Kiya

Ehtiyaatan   Kuchh   Mangaa   Li   Jaaey   Gi

Yaad-e-   Abru     Men     Hay   AKBAR   Mehv   Yun

Kab   Tiri   Yeh    Kaj   Khayaali   Jaaey   Gi

 Poet: Akbar   Allahabadi

 

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -سنجیدہ شاعری -