دل محوِ جمال ہو گیا ہے | میرا جی |

دل محوِ جمال ہو گیا ہے | میرا جی |
دل محوِ جمال ہو گیا ہے | میرا جی |

  

دل محوِ جمال ہو گیا ہے

یا صرفِ خیال ہو گیا ہے

اب اپنا یہ حال ہو گیا ہے

جینا بھی محال ہو گیا ہے

ہر لمحہ ہے آہ آہ لب پر

ہر سانس وبال ہو گیا ہے

وہ درد جو لمحہ بھر رُکا تھا

مُژدہ کہ بحال ہو گیا ہے

چاہت میں ہمارا جینا مرنا

آپ اپنی مثال ہو گیا ہے

پہلے بھی مصیبتیں کچھ آئیں

پر اب کے کمال ہو گیا ہے

شاعر: میرا جی

Dil   Mehv-e-Jamaal   Ho   Gaya   Hay

Ya   Sirf    Khayaal   Ho   Gaya   Hay

 Ab   Apna   Yeh   Haal   Ho   Gaya   Hay

Jeena   Bhi  Muhaal   Ho   Gaya   Hay

 Har   Lamha   Aah   Aah   Lab   Par

Har   Saans Wabaal   Ho   Gaya   Hay

 Wo   Dard   Jo   Lamha   Bhar   Ruka  Tha

Muzzda   Keh   Bahaal   Ho   Gaya   Hay

 Chaahat   Men   Hamaara   Jeena   Marna

Aap   Apni   Misaal   Ho   Gaya   Hay

 Pehlay   Bhi   Museebaten    Kuchh   Aaen

Par   Ab   K   Kamaal   Ho   Gaya   Hay

 Poet: Meera  Ji

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -غمگین شاعری -