آئندہ ہفتے نیو یارک میں مودی نواز ملاقات نہیں ہوگی ،بھارتی میڈیا کا دعویٰ

آئندہ ہفتے نیو یارک میں مودی نواز ملاقات نہیں ہوگی ،بھارتی میڈیا کا دعویٰ
آئندہ ہفتے نیو یارک میں مودی نواز ملاقات نہیں ہوگی ،بھارتی میڈیا کا دعویٰ

  


نئی دہلی (آئی این پی )بھارتی میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ آئندہ ہفتے نیو یارک میں اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس کے موقع پر پاک بھارت وزراء اعظم کے درمیان ملاقات نہیں ہوگی ۔بھارتی میڈیا کے مطابق پاکستان اور بھارت کے وزراء اعظم آئندہ ہفتے نیو یارک میں ہونے والے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں شرکت تو کریں گے تاہم ان دونوں رہنماؤں کی ملاقات طے نہیں ہے۔میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ امریکا اور سیکیورٹی کونسل کے دیگر مستقل ممبران نے پاکستان اور بھارت کے رہنماؤں پر زور دیا ہے کہ وہ جنرل اسمبلی کے اجلاس میں خطاب کے دوران کسی بھی قسم کی محاز آرائی سے گریز کریں۔وزیراعظم نواز شریف کی جانب سے خطاب کے دوران مسئلہ کشمیر کو اٹھائے جانے کے سوال پر پاکستان کے سینئر سفات کار کا کہنا تھا کہ کشمیر ایک اہم مسئلہ ہے اور اسے پر بات ہونی چاہیے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ بھارت اس بات کو محسوس کرتا ہے کہ ایل او سی پر جاری حالیہ کشیدگی کے باعث پاکستان مسئلہ کشمیر کو ’پہلے سے زیادہ شدت سے‘ اٹھا سکتا ہے۔بھارتی میڈیا میں آنے والی رپورٹس اس بات کی جانب اشارہ کررہی ہیں کہ اسی وجہ سے بھارت کے وزیراعظم نریندا مودی اقوام متحدہ کی 70 ویں جنرل اسمبلی سے خطاب نہیں کرے گے۔تاہم بھارتی وزیراعظم 26 ستمبر کو ہونے والی پائیدار ترقی کے اجلاس سے خطاب کرے گے اور وہ بھارتی وزیر خارجہ ششما سوراج کو جنرل اسمبلی سے خطاب کرنے کی ہدایت کرسکتے ہیں۔بھارتی میڈیا نے نئی دہلی میں موجود حکام کے حوالے سے رپورٹ کیا ہے کہ جیسا کہ حروف تہجی کی ترتیب کے مطابق بھارتی وزیراعظم پاکستانی وزیر اعظم سے پہلے خطاب کریں گے۔جس کی وجہ سے نواز شریف کی جانب سے اٹھائے جانے والے مسائل کا مودی جواب نہیں دے سکیں گے تاہم حروف تہجی کے مطابق ششما سراج نواز شریف کے بعد بات کریں گی تو وہ نواز شریف کی جانب سے اٹھائے جانے والے معاملات پر رد عمل دے سکتی ہیں۔

مزید : بین الاقوامی