چینی خاتون کا حمل ضائع ہو گیا، اس مصیبت کا اس نے کیا حل نکالا؟ جان کر آپ کو اپنی آنکھوں پر یقین نہ آئے گا

چینی خاتون کا حمل ضائع ہو گیا، اس مصیبت کا اس نے کیا حل نکالا؟ جان کر آپ کو ...
چینی خاتون کا حمل ضائع ہو گیا، اس مصیبت کا اس نے کیا حل نکالا؟ جان کر آپ کو اپنی آنکھوں پر یقین نہ آئے گا

  


بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان کے ہسپتالوں میں نوزائیدہ بچے چوری ہونے کے واقعات کبھی کبھار سننے میں آتے رہتے ہیں، ان واقعات کی بڑی وجہ روپے کا حصول ہی ہو سکتا ہے لیکن چین میں ایک خاتون اپنی بے احتیاطی کی وجہ سے اپنا حمل گرا بیٹھی مگر اپنا بچہ ضائع ہونے کی سزا اس نے ایک اور جوڑے کو دے ڈالی۔ مشرقی چین کے شہر ہونگ ژی میں خاتون ژاﺅ جوآن(فرضی نام)بچہ ضائع ہو جانے پر بہت افسردہ اور دل گرفتہ تھی، اس نے اس کا ایک حل نکالا اور نرس کا روپ دھار کر شہر کے ایک ہسپتال میں داخل ہو گئی اور کسی دوسرے جوڑے کا بچہ چرا کر لے گئی۔

مزید جانئے: جنسی تعلقات کے ذریعے منتقل ہونے والی خطرناک بیماریوں کی علامات

ژاﺅ نے یہ واردات اپنی طرف سے بڑی ہوشیاری سے کی لیکن سی سی ٹی وی کیمرے کی فوٹیج نے اس کا بھانڈا پھوڑ دیا ۔ ژاﺅ چوری شدہ بچہ لے کر شہر کے ایک اور ہسپتال میں چلی گئی اور ڈرامہ کیا کہ یہ بچہ اس کے ہاں پیدا ہوا ہے تاکہ ہسپتال میں اس کے ماں بننے اور بچے کی رجسٹریشن ہو سکے۔ ابھی وہ اس ہسپتال میں ہی تھی کہ پولیس نے اسے گرفتار کر لیا۔

ژاﺅ کا کہنا تھا کہ اس کا حمل پہلے تین ماہ بعد ہی ضائع ہو گیا تھا لیکن اس نے اپنے خاندان کو اس کی خبر نہ ہونے دی کیونکہ وہ چاہتی تھی کہ وہ اسے یونہی پیار کرتے رہیں اور اس کی احتیاط کرتے رہیں جو اسے حاملہ ہونے کے بعد سے مل رہی تھی۔ جب اس کے دن پورے ہونے کو آئے تو اسے فکر لاحق ہوئی کہ اب اپنی فیملی سے کیا جھوٹ بولے گی، جس پر اس نے کسی دوسرے کا بچہ چرا کر اس کی اپنے نام سے رجسٹریشن کروانے کا منصوبہ بنایا۔ ملزمہ نے دوران تفتیش اپنے جرم کا اعتراف بھی کر لیا ہے۔ پولیس نے بچہ اس کے اصل والدین کے حوالے کر دیا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس