شہر ی کا نام ای سی ایل سے نکالنے کیلئے دائر درخواست پر ایک ہفتے میں فیصلے کا حکم

شہر ی کا نام ای سی ایل سے نکالنے کیلئے دائر درخواست پر ایک ہفتے میں فیصلے کا ...

لاہور (نامہ نگار خصوصی) لاہور ہائیکورٹ نے علاج کے لئے بیرون ملک جانے کی اجازت اورای سی ایل سے نام خارج کرنے کیلئے دائر درخواست پر شہری کو سن کر درخواست کا فیصلہ کرنے کا حکم دیتے ہوئے قرار دیاہے کہ اگر ایک ہفتے میں فیصلہ نہ کیا تو آئندہ سماعت پر سیکرٹری داخلہ عدالت میں پیش ہوں ، فاضل عدالت نے رجسٹرار آفس کو درخواست کسی اور بنچ کے روبرو لگانے کی بھی ہدایت کردی۔مسٹر جسٹس سید منصور علی شاہ کے روبرو درخواست گزار جہانگیر الٰہی کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ درخواست گزار کا نام بنک ڈیفالٹر ہونے کی بناء پر 2001 ء میں ایگزٹ کنٹرول لسٹ میں شامل کیا گیا ، اب بینکنگ عدالت میں درخواست گزار کے خلاف دائر مقدمے کا فیصلہ ہو چکا ہے اور اب درخواست گزار کے ذمہ کوئی رقم بقایا نہیں ہے ،درخواست گزار کے وکیل نے مزید موقف اختیار کیا کہ علاج کی غرض سے بیرون ملک جانے کے لئے درخواست گزار نے 2009ء اور 2014 ء میں وزارت داخلہ سے رجوع کیا تا کہ جہانگیر الٰہی کا نام ای سی ایل سے خارج کیا جائے مگر درخواست پر تاحال کوئی کارروائی نہیں کی گئی، وزارت داخلہ کو درخواست پر فیصلہ کرنے کاحکم دیا جائے، سرکاری وکیل نے عدالت کو بتایا کہ درخواست گزار نے درخواست تو دی ہے مگر متعلقہ حکام کے سامنے خود پیش نہیں ہوئے اگر خود پیش ہوں تو ان کی درخواست کا فیصلہ کردیا جائے گا۔ عدالت نے فریقین کے دلائل سننے کے بعد علاج کے لئے بیرون ملک جانے کی اجازت اورای سی ایل سے نام خارج کرنے کے لئے دائر درخواست پر شہری کو سن کر درخواست کا فیصلہ کرنے کا حکم دیتے ہوئے قرار دیاہے کہ اگر ایک ہفتے میں فیصلہ نہ کیا تو آئندہ سماعت پر سیکرٹری داخلہ عدالت میں پیش ہوں ، فاضل عدالت نے رجسٹرار آفس کو درخواست کسی اور بنچ کے روبرو لگانے کی بھی ہدایت کردی ہے۔

مزید : صفحہ آخر