گورنر رفیق رجوانہ اور قائم مقام پرنسپل ایچی سن کالج امیرحسین کیخلاف توہین عدالت کی درخواست دائر

گورنر رفیق رجوانہ اور قائم مقام پرنسپل ایچی سن کالج امیرحسین کیخلاف توہین ...

لاہور(نامہ نگارخصوصی )ایچی سن کالج کے غیرفعال پرنسپل ڈاکٹر آغا غضنفر نے صدربورڈ آف گورنرایچی سن کالج ملک محمدرفیق رجوانہ اور قائم مقام پرنسپل ایچی سن کالج امیرحسین کے خلاف لاہورہائیکورٹ میں توہین عدالت کی درخواست دائر کردی۔اعجازعلی سبزواری ایڈووکیٹ کی وساطت سے دائر کی گئی توہین عدالت کی درخواست میں موقف اختیارکیا گیا کہ عدالت نے ڈاکٹر آغا غضنفر کو ایچی سن کالج کے پرنسپل کے عہدے پر معطل کرنے کے حوالے سے حکم امتناعی جاری کیا تھا جس پر ایچی سن کالج انتظامیہ نے یہ حکم امتناعی واپس لینے کی درخواست کی۔ اس درخواست کی سماعت کے دوران عدالت کے روبرو فریقین نے باہمی رضامندی سے 28اگست 2015ء کو ایک معاہدہ پیش کیا،جس میں طے پایاتھا کہ پروفیسر ڈاکٹر آغاغضنفر کوپرنسپل کے عہدے پربحالی کے حوالے سے فیصلے تک تنخواہ کی ادائیگی جاری رہے گی جبکہ ان سے سرکاری گھر، گاڑی اور ڈرائیور بھی واپس نہیں لیاجائے گا لیکن معاہدے کے برعکس ان کی 2ماہ سے تنخواہ بندہے اوراب ان سے سرکاری گاڑی اور ڈرائیورواپس لینے کے ساتھ ساتھ ان کا نام ایچی سن کالج کی ویب سائٹ سے بھی ہٹادیاگیاہے جو عدالتی حکم عدولی ہے۔ درخواست گزارنے عدالتی حکم عدولی پرصدربورڈ آف گورنرایچی سن کالج ملک محمدرفیق رجوانہ اور قائم مقام پرنسپل ایچی سن کالج امیرحسین کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی کرنے کی استدعا کی ہے۔

مزید : صفحہ آخر