لندن میں چاقوﺅں کے وار سے ایک اور نوجوان کا لرزہ خیز قتل ، رواں سال ہلاکتیں 10ہو گئیں

لندن میں چاقوﺅں کے وار سے ایک اور نوجوان کا لرزہ خیز قتل ، رواں سال ہلاکتیں ...
لندن میں چاقوﺅں کے وار سے ایک اور نوجوان کا لرزہ خیز قتل ، رواں سال ہلاکتیں 10ہو گئیں

  


لندن(مانیٹرنگ ڈیسک)30سے زائد نوجوانوں کے گینگ نے چاقوﺅں کے وار کر کے ایک مخالف نو عمر نوجوان کو موت کے گھاٹ اتار دیا ۔برطانوی اخبار ’دی سن ‘ کے مطابق سولہ برس کے مو دورا رائے کی ہلاکت کے بعد رواں سال لندن میں چاقوﺅں کے وار سے ہلاک ہونے والے نوجوانوں کی تعداد 10ہو گئی ہے۔قتل کا یہ لرزہ خیز واقعہ جنوبی لندن کے علاقے ”ایلی فینٹ اینڈ کیسل “ کے ایک پارک میں مقامی وقت کے مطابق رات 9بجے کے قریب پیش آیا جہاں فٹبال ٹیم ”مین یونائیٹڈ “ کے اس پُرستار کو چاقوﺅں کے پے در پے وار کر کے ہلاک کیا گیا ۔ اطلاع ملنے پر پولیس اور طبی امداد کے لئے پیرا میڈیکس موقع پر پہنچے لیکن وہ اس نوجوان کو نہ بچا سکے اور جائے حادثہ پر ہی اس کی موت کی تصدیق کر دی گئی ۔

مقتول نوجوان کی والدہ مریاما کیمرا نے کہا کہ اپنے بیٹے کو کھو دینے کا درد بہت زیادہ ہے ، بچوں کو چاقو پاس رکھنے سے روکا جانا چاہیے ۔ انہوں نے مزید کہا میرے بیٹے کا قتل سمجھ سے بالاتر ہے ،وہ بہت ہی اچھا لڑکا تھا اور بہترین مسکراہٹ کا مالک تھا ۔ دوسری جانب پولیس نے قتل کے شبے میںسات افراد کو حراست میں لیکر تفتیش شروع کر دی ہے ۔

مزید : بین الاقوامی