حج کے دوران مزید حادثات سے بچنے کیلئے سعودی حکومت کا قابل تحسین اقدام، شفاف تحقیقات یقینی بنانے کیلئے بھی اہم قدم اٹھالیا

حج کے دوران مزید حادثات سے بچنے کیلئے سعودی حکومت کا قابل تحسین اقدام، شفاف ...
حج کے دوران مزید حادثات سے بچنے کیلئے سعودی حکومت کا قابل تحسین اقدام، شفاف تحقیقات یقینی بنانے کیلئے بھی اہم قدم اٹھالیا

  


ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) گزشتہ جمعے کے روز مسجد الحرام میں پیش آنے والے المناک حادثے کے بعد حکام نے حج کے موقع تک مسجد الحرام کے توسیعی منصوبے میں کرینوں کے استعمال پر پابندی عائد کردی ہے۔ ’سعودی گزٹ‘ کے مطابق امیر مکہ کے مشیر ہشام الفالح کا کہنا ہے کہ تمام کرینوں کا معائنہ کیا جائے گا تاکہ اس بات کو یقینی بنایا جاسکے کہ انہیں درست طور پر نصب کیا گیا ہے۔

ایک موبائل ایپ جو آپ کو بڑے دھوکے سے بچا سکتی ہے

حالیہ حادثے کی تحقیقات کیلئے ایک کمیٹی بھی قائم کی جاچکی ہے اور اس کمیٹی نے سعودی آرامکو کمپنی اور سعودی کاﺅنسل آف انجینئرز کے ماہرین کو حادثے کی تحقیقات اور وجوہات جاننے کیلئے بلوالیا ہے۔ الفالح کا کہنا تھا کہ حادثے میں متاثر ہونے والے زیادہ تر حصوں کو تعمیر نو اور مرمت کے بعد کھول دیا گیا ہے، جبکہ صفا اور مروہ کے درمیان گرے ہوئے کرین کے حصوں کو ہٹانے کیلئے ماہرین سے رائے لی جارہی ہے۔

جرمن کمپنی Liebherr، جس کی طرف سے حادثے کا شکار ہونے والی کرین فراہم کی گئی تھی، کے تین ماہرین بھی اپنی خدمات فراہم کرنے کیلئے ہفتے کے روز سعودی عرب پہنچ چکے ہیں۔ کمپنی نے یہ کرین 2012ءمیں مملکت کو فروخت کی تھی۔

داعش کے منصوبے اور مکہ اور مدینہ، روسی صدر نے خوفناک دعویٰ کر دیا

مزید : بین الاقوامی