ہائی کورٹ نے سانحہ کوٹ رادھا کشن کیس کا ٹرائل روکنے کے حکم میں توسیع کردی

ہائی کورٹ نے سانحہ کوٹ رادھا کشن کیس کا ٹرائل روکنے کے حکم میں توسیع کردی
ہائی کورٹ نے سانحہ کوٹ رادھا کشن کیس کا ٹرائل روکنے کے حکم میں توسیع کردی

  


لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس سردار شمیم نے سانحہ کوٹ رادھا کشن میں میاں بیوی کو زندہ جلانے کے مقدمے کی کاروائی روکنے کی درخواست پرجاری کئے گئے حکم امتناعی میں 6 اکتوبر تک توسیع کردی۔کوٹ رادھاکشن میں مسیحی جوڑے کوزندہ جلانے کے الزام میں گرفتارملزمان اکرم اورافضل کی جانب سے دائردرخواست میں کہا گیا ہے کہ مقدمے کی سماعت کرنے والے دہشت گردی عدالت کے جج ہارون رشید کا رویہ متعصبانہ ہے ،ان کے مقدمے کو دہشت گردی کی دوسری عدالت میں منتقل کیا جائے۔

دونوں ملزمان کے وکیل سپریم کورٹ میں مصروف ہونے کی بنا پر عدالت میں پیش نہ ہوئے جس پر عدالت نے کاروائی روکنے کے جاری کئے گئے حکم امتناعی میں 6 اکتوبر تک توسیع کرتے ہوئے فریقین کے وکلاءکوحتمی بحث کے لئے طلب کرلیا۔استغاثہ کے16 گواہان دہشت گردی عدالت میں اپنے بیان قلمبند کرا چکے ہیں تاہم عدالت عالیہ کے حکم امتناعی کے باعث کیس کی سماعت روک دی گئی ہے۔

مزید : لاہور