قومی ٹیم کی ورلڈ کپ میں براہ راست رسائی مشکوک

قومی ٹیم کی ورلڈ کپ میں براہ راست رسائی مشکوک

  

لاہور (سپورٹس ڈیسک)پاکستانی ٹیم ایسے ہی کھلتی رہی تو، عالمی کپ میں مشکل ہوگی، ہیڈ کوچپاکستانی کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر کا کہنا ہے کہ پاکستانی کرکٹ ٹیم اگر ایسے گھسے پٹے انداز سے کھیلتی رہی تو اگلے ورلڈ کپ میں ٹیم کو شدید دشواری کا سامنا کرناپڑے گا۔غیر ملکی کرکٹ ویب سائٹ کو انٹرویو دیتے ہوئے مکی آرتھر کا کہنا تھا کہ ٹاپ سیون رینکنگ اور میزبان کا انتخاب ہر چار سال بعد خودکار طریقے سے کیا جاتا ہے۔ اس وقت رینکنگ میں پاکستان کا نواں نمبر ہے اور کٹ آف ڈیٹ ایک سال دور ہے۔ انکا کہنا ہے میرا پی سی بی اور کھلاڑیوں کے لیے مشورہ ہے کہ ہائی رسک، ہائی اوکٹین کرکٹ کھیلی جائے، تاکہ دیگر ٹیم کی طرح کارکردگی بہتر ہوسکے۔انٹرویو کے دوران ہیڈکوچ کا کہناتھا کہ کہ ٹیم میں جیت کا جنون بھرنے کے لیے اگر بڑے کھلاڑیوں کو ڈراپ کرنا پڑا تو وہ اس میں ذرہ برابر بھی ہجکچاہٹ محسوس نہیں کریں گے۔ مکی آرتھر کا کہنا ہے کہ تیس ستمبر دو ہزار سترہ کی ڈیڈ لائن سے پہلے ٹیم کو صرف چودہ ون ڈے کھیلنے ہیں۔ جس کے لئے وقت کم اور مقابلہ سخت ہے۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -