ڈیرہ غازیخان: 8ماہ کی تنخواہ سے محروم ٹیوب ویل آپریٹرز کا احتجاجی مظاہرہ

ڈیرہ غازیخان: 8ماہ کی تنخواہ سے محروم ٹیوب ویل آپریٹرز کا احتجاجی مظاہرہ

  

ڈیرہ غازیخان(نمائندہ خصوصی) 11سال قبل ورک چارج بھرتی کئے گئے میونسپل کا رپوریشن کے ٹیوب ویل آپریٹر ز آٹھ ماہ سے تنخواؤں سے محروم ،ملازمین نے بین الصوبائی شہراہ انڈس(بقیہ نمبر27صفحہ12پر )

ہائی وے پل شوریہ پر احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے شدید نعرہ بازی کی مظاہرین نے کہا کہ ہیں میئرکارپوریشن نے ان کو ریگولر کرنے کی بجائے 80 نئے ورک چارج بھرتی کئے ہیں ان کی تنخوائیں بند کردی ہیں مظاہرین میں محمد عمر ،مشتاق احمد،مرید حُسین پتافی ،نواز گجر،ریاض حُسین ،سجاد حُسین محمد کامران نے صحافیوں کو بتا یا کہ 2006 میں ٹی ایم اے نے ہم سے واٹر سپلائی ٹیوبلوں کے لیے زمین حاصل کی تھی جس کے لیے 21ٹیوبلوں پر 21 ملازمین بھرتی کرنے کا معائدہ ہوا جو تا حیات ملازم ہو ں گے تھاٹی ایم اے سے ہم ریگولر تنخوائیں لیتے رہے ہیں لیکن مئیر کارپوریشن نے 20 مارچ 2017 سے ہماری تنخوائیں بند کرکے ہمارے اوپر ظلم کیا ہے گھروں میں فاقہ کشی تک کی نوبت آچکی ہے ملازمین کے پاس اپنے بچوں اور والدین کے علاج کے لیے پیسے بھی نہیں ہیں۔ اس کے علاوہ بچوں کی سکول کی فیسں بھی ادا نہیں کرسکتے جس کی وجہ سے بچے پڑھائی سے محروم ہیں ملازمین کو تنخواہوں سے محروم رکھنا ظلم اور زیادتی ہے۔ مظاہرین نے وزیراعلی پنجاب ،کمشنر ڈیرہ ،ڈی سی سے مطالبہ کیا ہے ہماری تنخوائیں ادا کی جائیں اگر ملازمین کی تنخواہیں ادا نہ کی گئیں تو ہم ٹیوب ویل بند کرکے شہر کو سپلائی ہو نے والا پانی بند کردیں گے ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -