سٹریٹ کرائمز بڑھ گئے!

سٹریٹ کرائمز بڑھ گئے!

کراچی کے بعد لاہور میں بھی سٹریٹ کرائمز میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے، جو حال ہی میں تبدیل ہونے والے آئی جی پولیس حضرات کے لئے چیلنج کی حیثیت رکھتا ہے، کراچی میں تو مجرم ذہنیت کے حامل عرصہ سے سرگرم ہیں اور پولیس ان وارداتوں پر نہ صرف قابو نہیں پا سکی،بلکہ ان وارداتوں کے ذمہ دار پکڑے بھی نہیں گئے۔اسی طرح لاہور میں بھی یہی صورت حال ہے، یہاں بھی یہ جرائم بڑھتے ہی جا رہے ہیں، ہمارے سٹاف رپورٹر کی خبر کے مطابق ہر تین گھنٹے کے بعد ایک واردات ہو جاتی ہے، آٹھ ماہ کے دوران راہزنی اور چوری کی17ہزار وارداتوں کی رجسٹریشن ہوئی اور جن وارداتوں کی ایف آئی آر ہی نہیں کٹی ان کی تعداد بھی سوا ہے۔پنجاب میں ڈولفن، پیرو اور ایلیٹ فورس جیسی تنظیمیں اور فورسز ایسے جرائم روکنے ہی کے لئے بنائی گئیں اور ان کو خصوصی تربیت سے گزارا گیا۔کراچی اور سندھ میں بھی تربیت کا اہتمام کیا گیا، لیکن جرائم ہیں کہ بڑھتے جاتے ہیں،ایسی وارداتوں کی وجہ سے شہری عدم تحفظ کا شکار ہوتے اور کام کاج میں سست ہو جاتے ہیں،نئے آئی جی حضرات کے لئے یہ کھلا چیلنج ہے،ان کو اس سے نمٹنا ہو گا اور اِن جرائم پر قابو پانا ہو گا کہ ان کی وجہ سے سارے شہری عدم تحفظ کا شکار ہو چکے ہیں،امن و امان ریاست کی ذمہ داری اور اسے پورا بھی کرنا چاہئے۔

مزید : رائے /اداریہ