تہران سے ناطہ ختم کرو تعلقات بہتر ہو سکتے ہیں، امریکہ کی دمشق کو مشروط پیشکش

تہران سے ناطہ ختم کرو تعلقات بہتر ہو سکتے ہیں، امریکہ کی دمشق کو مشروط پیشکش

واشنگٹن(این این آئی)امریکا کی طرف سے ایک نئی دستاویز سامنے آئی ہے جس میں انکشاف کیا گیا ہے کہ امریکا نے اسد رجیم سے تعلقات میں بہتری کے لیے تہران کے ساتھ دمشق کیروابط ختم کرنے کی شرط عاید کی ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق جنیوا میں ہونے والے ایک اجلاس میں امریکی حکام نے شام کے لیے اقوام متحدہ کے مندوب سٹیفن دی میستورا کے سامنے ایک دستاویز پیش کی ہے ، یہ دستاویز گذشتہ روز برسلز میں ہونے والے ایک اجلاس میں یورپی حکام اور شامی اپوزیشن کے نمائندوں کے سامنے بھی پیش کی جا چکی ہے۔مذکورہ دستاویز میں شام میں جاری تنازع کے سیاسی حل کے حوالے سے تجاویز شامل ہیں۔ دستاویز میں شامی رجیم پر زور دیا گیا ہے کہ وہ ایرانی رجیم اور اس کی ملیشیاؤں کیساتھ اپنے تعلقات ختم کرے۔ شام کے دستور میں بہ تدریج اصلاحات لائے جن میں وزیراعظم کو صدر سے زیادہ با اختیار بنایا جائے۔ اس کے ساتھ ساتھ غیروفاقی نظام کے قیام کے ساتھ سیکیورٹی اداروں کی سول سطح پر اصلاح کی جائے۔

اس دستاویز میں تین اہم نکات بیان کیے گئے ہیں۔شام میں جاری جنگ کا خاتمہ، دستوری اصلاحات اور اقوام متحدہ کی زیر نگرانی شفاف انتخابات کا انعقاد،دستاویز میں کہا گیا ہے کہ اسد رجیم شام کو دہشت گردوں کی پناہ گاہ بننے کا تاثر زائل کرے، وسیع پیمانے پر تباہی پھیلانے والے ہتھیار تلف کرے اور پناہ گزینوں کی اقوام متحدہ کی شرائط کے تحت واپسی کے اقدامات کرے۔

مزید : عالمی منظر