حسنی مبارک کے بیٹے بدعنوانی کے الزام میں گرفتار

حسنی مبارک کے بیٹے بدعنوانی کے الزام میں گرفتار

قاہرہ (آن لائن)مصر کی عدالت نے ملک کے سابق معزول صدر حسنی مبارک کے 2 بیٹوں کو اسٹاک مارکیٹ میں بد عنوانی کے زیر سماعت کیس میں گرفتار کرنے کا حکم دے دیا، اعلیٰ مبارک اور گمال مبارک کے علاوہ 7 افراد پر اسٹاک مارکیٹ اور مرکزی بینک کے قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے مصر کے ال وطنِ بینک کے شیئرز سے غیر قانونی منافع کمانے کا الزام ہے۔رپورٹ کے مطابق سابق صدر حسنی مبارک کے بیٹے اعلیٰ ایک بزنس مین ہیں جبکہ ان کے بیٹے گمال سابق بینکر ہیں اور دونوں کی ضمانت 2015 میں منظور ہوئی تھی۔خیال رہے کہ گزشتہ سال کے آغاز میں مصر کی اعلیٰ عدالت نے اپنا آخری فیصلہ سناتے ہوئے سابق صدر حسنی مبارک کو 2011 میں مظاہرین کو قتل کرانے کے مقدمے میں بری کردیا تھا۔2011 میں ہونے والے یہ پرتشدد مظاہرے تقریباً 30 سال تک قائم رہنے والی حسنی مبارک کی حکومت کا تختہ الٹنے کے بعد ختم ہوئے تھے جبکہ حسنی مبارک عوامی بغاوت میں احتجاج کرنے والے افراد کی اموات میں ملوث ہونے کی وجہ سے یہ سزا کاٹ رہے تھے۔18 روز جاری رہنے والے مظاہروں میں پولیس اور احتجاجی مظاہرین کے درمیان ہونے والی جھڑپوں میں تقریباً 850 افراد ہلاک ہوئے تھے۔

مزید : صفحہ اول