صوابی ،پی کے 44 انتخاب،اے این پی اور پی پی نے اتحاد کرلیا

صوابی ،پی کے 44 انتخاب،اے این پی اور پی پی نے اتحاد کرلیا

صوابی (بیورورپورٹ)پندرہ اکتوبر کو صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی کے 44صوابی2پر ہونے والے ضمنی الیکشن کے لئے اے این پی اور پی پی پی کے مابین انتخابی اتحاد ہو گیا جس کے نتیجے میں پی پی پی نے اپنا نامزد امیدوار صفدر علی خان کو اے این پی کے امیدوار غلام حسن کے حق میں دستبر دار کر لیا اس سلسلے میں پی پی پی کے ضلعی رہنما جاوید اقبال انقلابی کے حجرہ میں اے این پی اور پی پی پی کا مشترکہ اجلاس ہوا جس میں پی پی پی کے علی خان ، گوہر علی انقلابی ، جان عالم ، صفدر علی ، عالم شیر ٹھیکہ دار ، سخاوت شاہ ، سکندر خان ، محمد طاہر ، شبیر منیجر جب کہ اے این پی کے امیدوار غلام حسن، ضلعی صدر شہر یار خان ، جنرل سیکرٹری محمد اسلام خان ، صوبائی رہنما محمد اشفاق خان ایڈوکیٹ ،اکمل خان ، نوابزادہ اور دونوں جماعتوں کے دیگر رہنماؤں نے شرکت کی اس موقع پر ضمنی الیکشن میں مشترکہ طور پر اتحاد کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا اے این پی کے رہنما محمد اشفاق خان ایڈوکیٹ نے ہمارے نمائندے کو بتایا کہ ضمنی الیکشن میں پی پی پی کی حمایت سے اے این پی کے امیدوار غلام حسن کی پوزیشن مزید مستحکم ہو گئی ہے دونوں جماعتوں کے مابین اتحاد کے حوالے سے مذاکرات کامیاب ہو گئے ہیں اور پی پی پی کے امیدوار صفدر علی خان نے اے این پی کے امیدوار غلام حسن کے حق میں اپنے کاغذات واپس لے لیے۔ انہوں نے بتایا کہ بہت جلد مسلم لیگ ن اور ایم ایم اے کے ساتھ ملاقاتوں کا دور ہو گا جس میں وہ اپنے امیدوار اے این پی کے امیدوار کے حق میں دستبر دار کرنے کا فیصلہ کرینگے انہوں نے کہا کہ ضمنی الیکشن میں متحدہ اپوزیشن کی کامیابی یقینی ہے اور اے این پی کا امیدوار بھاری اکثریت سے کامیاب ہونگے۔#

مزید : پشاورصفحہ آخر