سندھ پولیس کو نشانہ بنانے والے پی ٹی آئی کے اتحادی ہیں،مرتضی وہاب

سندھ پولیس کو نشانہ بنانے والے پی ٹی آئی کے اتحادی ہیں،مرتضی وہاب

کراچی(اسٹاف رپورٹر)وزیر اعلی سندھ کے مشیر برائے اطلاعات، قانون اور اینٹی کرپشن مرتضی وہاب نے کہاہے سندھ پولیس کو نشانہ بنانے والے پی ٹی آئی کے اتحادی ہیں۔ وزیر اعلی سندھ کے مشیر نے صوبائی اسمبلی میں نامزد اپوزیشن لیڈر کے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ ڈی پی او قصور رضوان گوندل کے ساتھ جو پی ٹی آئی نے کیا وہ راز کی بات نہیں مگر اس سارے معاملے کے بعد بھی آج وفاق میں حکمران جماعت نے رٹ لگا رکھی ہے کہ وہ پولیس میں سیاسی مداخلت کے قائل نہیں۔ جو کچھ قصور میں ایک پولیس افسر کے ساتھ پی ٹی آئی نے کیا اس رویہ پر نہ صرف وزیر اعلی پنجاب بلکہ عمران خان کو خود بھی معذرت کرنے چائیے تھی۔ مرتضی وہاب نے شمیم نقوی کے بیان پر بات کرتے ہوئے کہا کہ شمیم نقوی کی اپنی جماعت جہاں اقتدار میں رہی وہاں جیلیں ٹوٹیں دہشتگرد فرار ہوگئے۔ بنوں جیل اور ڈیرہ اسماعیل خان جیل ٹوٹنے کے واقعات پر کب لب کشائی کی جائے گی۔ جہاں پی ٹی آئی نے قدم رکھا وہاں دہشتگردوں کو آزادی نصیب ہوئی۔ انکا مزید کہنا تھا کہ سندھ پولیس نے تاریخ کا مشکل ترین آپریشن کامیابی سے ہمکنار کیا، پچھلے کئی سالوں سے سندھ پولیس، رینجرز اور دیگر قانون نافذ کرنے والے ادارے دہشتگردوں کے خلاف پورے عزم کے ساتھ برسرپیکار ہیں۔ صوبائی مشیر نے اپنے بیان میں مزید کہا کہ سندھ پولیس کو نشانہ بنانے والے آج پی ٹی آئی کے اتحادی ہی ۔ ہم پر تنقید کریں مگر تعمیری و مثبت تنقید ہو تو ہم اسے خوش امدید کہیں گے۔ پنجاب میں سیاسی بنیادوں پر پولیس کے تبادلے کرنے والے اپنے گریبان میں ضرور جھانکیں۔ انھوں نے شہر میں جرائم کی خبروں پر اپنا ردعمل دیتیہوئے کہا کہ عبوری حکومت کی ناکام داخلہ پالیسی نے اسٹریٹ کرائمز میں اضافہ کیا۔ عبوری حکومت نے افسران کے غلط تبادلے کر کے داخلہ امور کو غلط سمت ڈالا۔ سندھ پولیس شہر میں جرائم کی روک تھام کے لیے دن رات مصروف عمل ہے۔دہشتگردوں کی حکومتی امداد دینے والے سندھ پولیس پر تنقید سے باز رہیں۔سندھ پولیس ہر بے جا تنقید کر کے افسران و اہلکاروں کے حوصلے پست نہیں کیے جاسکتے۔

Back to Conversion Tool

 

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر