اے پی سی کیلئے لیگی وفد کی تشکیل پر نواز شریف ناراض، مریم کا نام شامل کرنیکی ہدایت 

  اے پی سی کیلئے لیگی وفد کی تشکیل پر نواز شریف ناراض، مریم کا نام شامل ...

  

 لندن (آئی این پی) اپوزیشن کی طرف سے 20ستمبر کو بلائی گئی آل پارٹیز کانفرنس میں مسلم لیگ (ن) کے وفد کی تشکیل کے معاملے پر پارٹی قائد اور سابق وزیراعظم نواز شریف نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے پارٹی صدر شہباز شریف کو ہدایت کی ہے کہ اے پی سی میں شرکت کے لئے مسلم لیگ (ن) کے وفد کی تشکیل نو دوبارہ کی جائے اور اس میں پارٹی کی نائب صدر مریم نواز کا نام بھی شامل کیا جائے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ گزشتہ روز پارٹی ترجمان کی طرف سے جاری بیان میں یہ کہا گیا تھا کہ پارٹی صدر شہباز شریف کی سربراہی میں ایک وفد اے پی سی میں شرکت کرے گا جس میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی‘ پارلیمانی لیڈر خواجہ آصف‘ سیکرٹری جنرل احسن اقبال‘ سابق سپیکر ایاز صادق‘ (ن) لیگ کے پی کے کے صدر امیر مقام اور پارٹی کی ترجمان مریم اورنگزیب شامل ہوں گی۔  تاہم کچھ ہی دیر  بعد پارٹی ترجمان کو  یہ بیان واپس لینا پڑا اور اپنے نئے بیان میں یہ کہا کہ اے پی سی میں پارٹی وفد کی شرکت کا باضابطہ اعلان میاں شہباز شریف کریں گے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ گزشتہ روز ٹی وی چینلز پر جب یہ خبر چل گئی جس میں پارٹی وفد کی شرکت کا ترجمان کی طرف سے اعلان کیا گیا تو مریم نواز نے اس پر سخت ناراضگی کا اظہار کیا اور لندن میں بھی پارٹی قائد میاں نواز شریف کو جب یہ صورتحال پتہ چلی تو ترجمان کو یہ بیان واپس لینا پڑا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اے پی سی میں شرکت کے لئے پارٹی وفد کا اعلان میاں شہباز شریف کریں گے اور اس میں مریم نواز بھی شامل ہوں گی۔ پہلے اعلامیے میں مریم نواز کا نام شامل نہیں کیا گیا تھا۔ دریں اثناء میاں شہباز شریف نے اے پی سی میں شرکت کے معاملے اور ایجنڈے پر منگل کو  پارٹی کے بعض سینئر رہنماؤں سے بھی اسلام آباد میں مشاورت کی ہے۔  

نواز شریف ناراض

مزید :

صفحہ اول -