ریشنلائزیشن مسترد‘اساتذہ کی تعظیم‘ صرف تدریسی ڈیوٹی لی جائے: پاکستان فورم

 ریشنلائزیشن مسترد‘اساتذہ کی تعظیم‘ صرف تدریسی ڈیوٹی لی جائے: پاکستان فورم

  

ملتان (اعجاز مرتضیٰ سے)ریشنلائزیشن کے نام پر اساتذہ  کے تبادلے کرکے ان کو پریشان کرنے کا سلسلہ بند کیاجائے‘اپ گریڈ ہوکر ہائی سکول کا درجہ پانے والے (بقیہ نمبر40صفحہ10پر)

سکولوں میں اساتذہ تعینات کئے جائیں۔ایس این ای کے بغیر مڈل سکولوں کو ہائی کا درجہ دینے کے معاملے کا وزیر اعلی ٰ نوٹس لیں‘ اساتذہ کو ناجائز سزائیں دینے کا سلسلہ بند کیاجائے‘ تدریسی ڈیوٹی کے علاوہ کوئی اور ڈیوٹی نہ لی جائے۔ گرلز سکولز پر صرف خواتین اسسٹنٹ ایجوکیشن آفیسرز تعینات کی جائیں۔ بوائز سکولزمیں تعینات تمام معلمات کو گرلز سکولز میں شفٹ کیاجائے۔ان خیالات کا اظہار اساتذہ رہنماؤں نے ”پاکستان فورم“ میں کیا۔ صدر مرکزیہ پنجاب ٹیچرز یونین پنجاب و چیئرمین متحدہ محاذ اساتذہ پاکستان حافظ غلام محی الدین اور چیئرمین متحدہ محاذ اساتذہ پنجاب و سرپرست اعلی ٰآل پنجاب گورنمنٹ ایمپلائز گرینڈ الائنس حافظ عبدالناصرنے کہا کہ تعلیمی اداروں اور اساتذہ کے مسائل فوری طور پر حل کئے جائیں۔ ریشنلائزیشن کے نام پر اساتذہ کے تبادلے کرکے انہیں پریشان کرنے کا سلسلہ بند کیاجائے اور اس صورتحال کے ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کی جائے‘وزیر اعلی ٰپنجاب روڈ میپ کے انڈیکیٹرز بھی ختم کئے جائیں۔میاں طیب احمد بودلہ مرکزی سیکرٹری اطلاعات پنجاب ٹیچرز یونین پنجاب و سیکرٹری اطلاعات متحد ہ محاذ اساتذہ پنجاب اور میاں محمد شفیق کمبوہ صدر پنجاب ٹیچرز یونین ملتان ڈویژن نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ تمام سکولز میں سٹاف اور فرنیچر کی کی کمی سمیت تمام مسائل حل کئے جائیں۔ اساتذہ کے تبادلوں کے مراحل کو آسان بنایاجائے‘ای ٹرانسفر میں آسانیاں پیدا کرکے سہولتیں دی جائیں۔خصوصاً دور دراز علاقوں میں تعینات معلمات کو ریلیف دیتے ہوئے ان کو ان کے گھروں کے نزدیکی سکولز میں تعینات کیاجائے کیونکہ معلمات کو روزانہ طویل سفر کی صعوبتیں‘ اذیتیں اور مشکلات برداشت کرنا پڑتی ہیں‘ حکومت اس صورتحال کا نوٹس لے اور ہمدردانہ فیصلے کرے۔انہوں نے کہا کہ ویڈ لاک پالیسی کے تحت ٹرانسفر کی سہولت تحصیل سطح پر بھی دی جائے۔اساتذہ خصوصاًمعلمات کے لئے اتفاقیہ رخصت‘ بیماری اور ایمرجنسی کی صورت میں چھٹیوں کا طریقہ کار سہل بنایاجائے۔اساتذہ سے صرف تدریسی ڈیوٹی لی جائے‘ اس کے علاوہ ان سے کوئی اور ڈیوٹی نہ لی جائے۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ ہر سکول میں خاکروب تعینات کئے جائیں اور صفائی کا دیرینہ مسئلہ حل کیاجائے۔انہوں نے کہا کہ حیرت ہے کہ پنجاب میں 1200 مڈل سکولوں کو بغیر ایس این ای منظوری کے اپ گریڈ کرکے ہائی سکول بنادیا گیا ہے‘ نہم کی کلاسز شروع کردی گئی ہیں مگر وہاں سبجیکٹ سپیشلسٹ اساتذہ تعینات نہیں کئے گئے ہیں۔ان تمام سکولوں میں فوری طور پر ہائی کلاسز کے سیکشنز میں اساتذہ تعینات کئے جائیں۔رانا محمد اسلم ساغر صدر پنجاب ٹیچرز یونین ضلع ملتان اورمحمد اسلم وٹو جنرل سیکرٹری پنجاب ٹیچرز یونین ضلع ملتان نے کہا کہ لٹریسی نمریسی ڈرائیو ٹیسٹ سکولز سربراہان خود لے سکتے ہیں اور اس میں بہتری آئے گی۔انہوں نے کہا کہ اساتذہ کا کام تدریس ہے‘ انرولمنٹ کے لئے گھروں سے بچوں کو لانے کی ڈیوٹی ان کی نہیں ہے‘  بچوں کو داخلے کے بعد سکول نہ بھجوانے والے والدین کے خلاف کارروائی کی جائے‘ انہو ں نے کہا کہ ریشنلائزیشن کو مسترد کرتے ہیں اور اس سلسلے میں مزاحمت کی جائے گی۔

پاکستان فورم

مزید :

ملتان صفحہ آخر -