مقبوضہ کشمیر میں دکاندارپرتشدداورماورائے عدالت قتل ، پاکستان نے بھارت کا مکروہ چہرہ بے نقاب کردیا 

مقبوضہ کشمیر میں دکاندارپرتشدداورماورائے عدالت قتل ، پاکستان نے بھارت کا ...
مقبوضہ کشمیر میں دکاندارپرتشدداورماورائے عدالت قتل ، پاکستان نے بھارت کا مکروہ چہرہ بے نقاب کردیا 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان نے مقبوضہ کشمیر میں دکاندارپرتشدداورماورائے عدالت قتل کی مذمت کی ہے۔

نجی ٹی وی کے مطابق ترجمان دفتر خارجہ نے مقبوضہ وادی میں قابض بھارتی فوج کی جانب سے مظلوم کشمیری دوکاندار پر تشدد اور ماورائے عدالت قتل کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ  گزشتہ ایک سال میں 300 سے زائدبے گناہ کشمیریوں کوشہیدکیاگیا،مقبوضہ وادی میں قابض بھارتی فوج مظلوم اور نہتے کشمیریوں کوجعلی سرچ آپریشنزاوردیگرکارروائیوں کے نام پر شہیدکر رہی ہے۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق سوپورکے23 سالہ عرفان احمدکوبھارتی فورسزنے گھر سے اٹھایا تھا،عرفان احمدکوپولیس تحویل میں بہیمانہ تشددکرکے شہیدکیاگیا، گزشتہ ایک سال میں 300 سے زائدبے گناہ کشمیریوں کوشہیدکیاگیا،کشمیریوں کوجعلی سرچ آپریشنزاوردیگرکارروائیوں میں شہیدکیاگیا۔ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ بھارت ریاستی دہشت گردی سے کشمیریوں کی آوازکودبایانہیں سکتا۔

واضح رہے کہ مقبوضہ وادی میں 05اگست 2019سے مکمل لاک ڈاﺅن اور کرفیو ہے۔ بھارت کے آرٹیکل 370اور 35-Aمیں تبدیلی کے بعدمقبوضہ وادی میں پرتشدد اور ماورائے عدالت قتل کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے۔ بھارت نے تمام کشمیری رہنماؤں کو گرفتار اور نظر بند کیا ہوا ہے۔ بھارتی فورسز دہشت گردی کی آڑ میں بے شمار نوجوانوں کو قتل کر چکی۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -