چہلم امام حسینؓ پرسکیورٹی کے بہترین انتظامات یقینی بنائے جائیں، آئی جی 

چہلم امام حسینؓ پرسکیورٹی کے بہترین انتظامات یقینی بنائے جائیں، آئی جی 

  

لا ہو ر (کر ائم رپو رٹر)انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب فیصل شاہکار نے کہاہے کہ صوبے کے تمام اضلاع میں چہلم حضرت امام حسین ؑ کے عزاداری جلوسوں اور مجالس کے سکیورٹی انتظامات کیلئے دستیاب وسائل اورجدید ٹیکنالوجی کے موثر استعمال سے بہترین انتظامات یقینی بنائے جائیں جبکہ سینئر افسران خود فیلڈ میں نکل کرحساس جلوسوں اور مجالس کے سیکیورٹی انتظامات کی انسپکشن کریں۔ آئی جی پنجاب نے ہدایت کی کہ مرکزی و حساس مجالس اور جلوسوں کے راستوں میں آنے والی عمارتوں کی چھتوں پر سنائپرز کو لازمی تعینات کیا جائے جبکہ خواتین کی مجالس اور جلوسوں میں لیڈی کانسٹیلز سکیورٹی اور چیکنگ کے فرائض سر انجام دیں گی۔ آئی جی پنجاب فیصل شاہکار نے کہاکہ سنٹرل پولیس آفس کی جانب سے جاری کردہ سکیورٹی ایس او پیز پر من و عن عمل درآمد ہر صورت یقینی بنایا جائے، عزاداری جلوسوں اور مجالس کی سکیورٹی انتظامات کیلئے علمائے اکرام، امن کمیٹیوں اور دیگر اسٹیک ہولڈرز سے کلوز کواڈی نیشن رکھی جائے۔ آئی جی پنجاب نے ہدایت کی کہ جلوس روٹس پر متبادل راستوں سے ٹریفک کی ہموار روانی کو برقرار رکھنے کیلئے وارڈنز اور اہلکاروں کی اضافی نفری تعینات کی جائے  آئی جی پنجاب نے ہدایت کی کہ لاہور میں حضرت عثمان علی ہجویری المعروف داتا گنج بخش ؒ کے سالانہ عرس کے موقع پر بھی سکیورٹی کے فول پروف انتظامات یقینی بنائے جائیں۔

 اور سکیورٹی پر مامور سٹاف عزاداروں اور زائرین کے ساتھ شائستگی کے ساتھ پیش آئیں۔ آئی جی پنجاب نے ہدایت کی کہ سیف سٹی کیمروں کی مدد سے چہلم کے مرکزی جلوس اور عرس تقریبات کی لمحہ بہ لمحہ مانیٹرنگ یقینی بنائی جائے اور ایمر جنسی صورتحال سے نمٹنے کیلئے اضافی نفری کو اسٹینڈ بائی رکھا جائے۔ یہ ہدایات آئی جی پنجاب نے چہلم حضرت امام حسین ؑ کے سکیورٹی انتظامات کے حوالے سے جاری کیں۔ ترجمان پنجاب پولیس نے بتایا کہ چہلم حضرت امام حسینؑ کے موقع پر صوبہ بھر میں مجموعی طور پر 301 جلوس اور 530 مجالس منعقد ہو رہی ہیں جن کی سکیورٹی کیلئے 42 ہزار سے زائد اہلکار و افسران اور والنٹیئر ڈیوٹی سر انجام دیں گے۔ ترجمان پنجاب پولیس نے بتایا کہ صوبائی دارالحکومت لاہور میں چہلم حضرت امام حسینؑ کے 03 بڑے جلوس اور 40 مجالس منعقد ہو رہی ہیں جن کی سکیورٹی کیلئے 10 ہزار سے زائد اہلکار، افسران اور والنٹیرز ڈیوٹی سر انجام دیں گے۔ ترجمان پنجاب پولیس نے مزیدکہاکہ صوبہ بھر میں حساس اور اے کیٹیگری کے جلوسوں اور مجالس کو چار درجاتی سکیورٹی فراہم کی جائے گی جبکہ سنٹرل پولیس آفس کنٹرول روم سے عرس حضرت علی بن عثمان الہجویری ؒ، چہلم جلوسوں اور مجالس کے سکیورٹی انتظامات کی براہ راست نگرانی کی جائے گی۔

مزید :

علاقائی -