پراپرٹی ٹرانسفر فیس ایک فیصد مقرر، رجسٹریوں میں اضافہ، ریونیو بڑھے گا: پرویز الٰہی

      پراپرٹی ٹرانسفر فیس ایک فیصد مقرر، رجسٹریوں میں اضافہ، ریونیو بڑھے ...

  

      لاہور(جنرل رپورٹر)وزیر اعلی پنجاب چودھری پرویزالٰہی کا صوبے کے عوام کی سہولت کیلئے ایک اور احسن اقدام۔وزیر اعلی پنجاب چودھری پرویزالٰہی نے صوبے میں پراپرٹی کی ٹرانسفر فیس میں بڑی کمی کر دی۔وزیر اعلی پنجاب چودھری پرویزالٰہی نے صوبے بھر میں پراپرٹی ٹرانسفر فیس جو پہلے بہت زیادہ تھی کو ایک فیصد مقرر کردیاہے۔وزیراعلیٰ چودھری پرویزالٰہی کا کہنا ہے کہ اس اقدام سے پنجاب حکومت کا ریونیو بہت بڑھ جائے گااورپنجاب حکومت نے یہ فیصلہ صوبے کے عوام کے وسیع تر مفاد میں کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ اس فیصلے سے صوبے بھر میں رجسٹریوں میں اضافہ ہو گا۔ہمارے اقدام کا مقصد عوام کو ریلیف دینا ہے اوراس اقدام سے تعمیراتی صنعت کو فروغ ملے گا اور روزگار کے لئے بے پناہ مواقع پیدا ہوں گے۔وزیر اعلی پنجاب چودھری پرویزالٰہی کی زیر صدارت وزیراعلیٰ آفس میں اجلاس منعقد ہوا۔اجلاس میں سینئر ممبر بورڈ آف ریونیو زاہد اختر زمان، پرنسپل سیکرٹری وزیر اعلی پنجاب محمد خان بھٹی اور سیکرٹری خزانہ افتخار امجدنے شرکت کی۔ چودھری پرویز الٰہی کی زیر صدارت وزیراعلیٰ آفس میں جیل اصلاحات سے متعلق خصوصی اجلاس منعقد ہوا۔اجلاس میں جیلوں میں قیدیوں کی فلاح وبہبود کیلئے متعدد تجاویز اورسفارشات پیش کی گئی۔وزیراعلیٰ چودھری پرویز الٰہی نے جیل ریفارمزکے حوالے سے7روز میں حتمی پلان طلب کرلیا۔وزیراعلیٰ چودھری پرویز الٰہی نے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا کہ دوران تعلیم بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے قیدیوں کو سزا میں رعایت ملے گی جبکہ جیل ہسپتالوں میں ڈیوٹی کرنے والے ڈاکٹرز کو ڈیڑھ لاکھ روپے خصوصی الاؤنس دینے کااصولی فیصلہ کیاہے۔اجلاس میں ہر قیدی کواہل خانہ سے گفتگو کے لئے تین سو منٹ ماہانہ دینے کی سفارش کی گئی۔وزیراعلیٰ چودھری پرویز الٰہی نے قیدیوں کیلئے ناشتے میں انڈے اورمعیاری خوراک فراہم کرنے کی ہدایت کی۔انہوں نے کہا کہ غیر ملکی قیدیوں کی متعلقہ قونصل جنرل تک رسائی کیلئے ضروری کارروائی عمل میں لائی جائے۔اجلاس میں جیل کنٹین کے انتظامات یوٹیلٹی سٹور یا دیگر بڑے سٹورزکے سپرد کرنے کا فیصلہ کیاگیا۔وزیراعلیٰ چودھری پرویز الٰہی نے لاوارث قیدیوں کو مفت لیگل ایڈ فراہم کرنے کیلئے فوری اقدامات کاحکم دیا۔انہوں نے کہا کہ تمام جیلوں کے قیدیوں کو ذاتی صفائی کیلئے ہائی جین کٹ بھی فراہم کی جائے گی۔ہر تین ماہ کے بعد قیدیوں کا میڈیکل چیک اپ یقینی بنایا جائے اور خواتین قیدیوں کیلئے میموگرام میڈیکل ٹیسٹ کی سہولت مہیا کی جائے۔انہوں نے کہا کہ قیدیوں کی اہل خانہ سے ملاقات کیلئے بہتر انتظامات اورکمروں کا اہتمام کیا جائے۔جیلوں میں کولنگ سسٹم کی تنصیب کا کام مرحلہ وار مکمل کیا جائے۔43جیلوں کے ہسپتالوں کے انتظامات محکمہ صحت کے سپرد،مزیداپ گریڈیشن کی جائیگی۔انہوں نے کہا کہ جیلوں کو قیدیوں کے لئے رہنے کے قابل ہونا چاہیے۔ جیلوں میں قیدیوں کوبنیادی انسانی حقوق کی فراہمی یقینی بنانا چاہتاہوں۔ریفارمز کا مقصد جیلوں میں قیدیوں کو بنیادی سہولتوں کی فراہمی ہے۔جیلوں میں قید بچوں کیلئے جمنیزیم اورسپورٹس کا اہتمام کیا جائے۔وزیراعلیٰ پرویز الٰہی نے قیدی خواتین و بچوں کے حقوق کیلئے جیل ریفارمز کمیٹی کی رکن حبا فوادکی کاوشوں کو سراہا اورکہا کہ حبافواد نے خواتین قیدیوں اوربچوں کے حقوق کے تحفظ کیلئے قابل قدر کام کیا ہے اورمیں جیل ریفارمز کے حوالے سے حبافوادکی کارکردگی کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں۔اجلاس میں قیدیوں کی عدالتوں میں پیشی کیلئے اے سی بسیں فراہم کرنے کی تجویز کا بھی جائزہ لیاگیا۔سابق وفاقی وزیرمونس الٰہی،صوبائی وزراء محمد بشارت راجہ، کرنل (ر) ہاشم ڈوگر،صوبائی مشیر عامر سعید راں، پرنسپل سیکرٹری وزیراعلیٰ محمد خان بھٹی،ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ، انسپکٹر جنرل جیل خانہ جات، جیل اصلاحات کمیٹی کے ارکان ہمیش خان،حبافواد، ریمل محی الدین، سارہ بلال، حماد ارشد اورمتعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔ہمیش خان اوردیگر اراکین نے جیل ریفارمز کے حوالے سے تجاویز پیش کیں۔

پرویزالٰہی

لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب چودھری پرویزالٰہی سے اٹک کے اراکین پنجاب اسمبلی ملک محمد انور اور ملک جمشید الطاف نے ملاقات کی جس میں باہمی دلچسپی کے امور، سیاسی صورتحال اور ترقیاتی منصوبوں پر پیشرفت پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعلیٰ چودھری پرویز الٰہی نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دعوؤں کی بجائے عمل پر یقین رکھتا ہوں۔میرے سابقہ دور کے فلاحی کام آج بھی عوام کو یاد ہیں۔ذاتی نمود ونمائس کے بجائے نئے ادارے بنائے جو آج تنآور درخت بن چکے ہیں۔ اللہ تعالیٰ نے جب بھی موقع دیا،ہم نے عوام کی بے لوث خدمت کی جبکہ دوسری طرف مخالفین نے ہمیشہ سازشیں کیں۔وزیراعلیٰ چودھری پرویز الٰہی نے کہا کہ 13 جماعتوں کے اتحاد پی ڈی ایم نے چند ماہ میں ملک کا بیڑا غرق کر دیا ہے۔ اس ٹولے سے ملک چل رہا ہے نہ معیشت سنبھل رہی ہے۔عمران خان اکیلے نے 13 جماعتوں کے کاغذی شیروں کو صفر کر دیا ہے۔پنجاب میں اتحادی جماعت پی ٹی آئی کے ساتھ مثالی ورکنگ ریلیشن شپ ہے۔مخالفین کا کام پراپیگنڈہ کرنا ہے اور وہ کرتے رہیں، کوئی فرق نہیں پڑتا۔ہم عمران خان کے ساتھ مل کر فلاح وبہبود کے کام کر رہے ہیں اور کرتے رہیں گے۔

ملاقات

مزید :

صفحہ اول -