بدعنوان سیاست کے بھگوان بنے بیٹھے ہیں، خواجہ سعد رفیق

بدعنوان سیاست کے بھگوان بنے بیٹھے ہیں، خواجہ سعد رفیق

لاہور(جنرل رپورٹر ) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما اورامیدواراین اے125 خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے کہ بدعنوان اوربدزبان سیاست کے بھگوان بنے بیٹھے ہیں ،پاکستان کے مجبورعوام11مئی کوان کے غرورکاسومنات توڑدیں گے۔ملک توڑنے اورکشکول توڑنے والے11مئی کومدمقابل ہوں گے۔میاں نوازشریف اپنے دورمیں قومی معیشت کوٹیک آف کی پوزیشن پر لے آئے تھے مگر پرویزی آمریت کا شب خون پاکستان کوتاریک راہوں پرلے گیا ۔ہم نظریہ پاکستان کے علمبردار اورقومی حمیت کے محافظ ہیں، ہمارے ہوتے ہوئے اس سرزمین پاک پرکوئی آنچ نہیں آسکتی۔11مئی قومی اداروں کوتوڑنے اوروفاق کی حامی جمہوری قوتوں کوجوڑنے والی قیادت کے درمیان تفریق اورفیصلے کادن ہے۔ہمارا مقابلہ سیاستدانوں کے ساتھ نہیں زربابا کے پیروکاروں اور سرمایہ داروں کے ساتھ ہے۔کالے دھن اوردھونس سے ہمیں اپنے ملک اورعوام کی خدمت کرنے سے نہیں روکاجاسکتا ۔زرداریوں اورمداریوں نے پانچ سال میں عوام کوکچھ نہیں دیا بلکہ الٹا ان سے سب کچھ چھین لیا ۔وہ وائے بلاک ڈی ایچ اے اورمست اقبال روڈفردوس پارک میں عوامی اجتماعات سے خطاب کررہے تھے۔جلسہ گاہ میں خواجہ سعدرفیق کاڈھول کی تھاپ پروالہانہ استقبال کیا گیا ،نوجوانوں نے انہیں اپنے کندھوں پراٹھا لیا۔مین روڈ سے جلسہ گاہ تک جانے والی گلیوں کودلہن کی طرح سجایا گیا تھا۔میاں نصیر احمداورچودھری یٰسین سوہل،غزالہ سعد رفیق ،مسزلبنیٰ فیصل،فرزانہ نصیر،نفیسہ آپااورعمرانہ طاہر سمیت مقامی رہنماﺅں نے بھی خطاب کیا ۔ خواجہ سعد رفیق نے مزیدکہا کہ پیالی کے طوفان کوسونامی کانام دیاجارہا ہے ،مسلم لیگ (ن)محض ایک سیاسی جماعت نہیں بلکہ ایک ایسا عوامی سمندر ہے جس میں کئی سونامی سماءگئے۔ ریاست ،جمہوریت اورمعیشت کیلئے این آراوزدگان کاوجودبرڈفلووائرس سے زیادہ خطرناک ہے ۔انہوں نے کہاکہ ایوان صدر مسلسل پانچ سال تک قومی مجرموں کیلئے پناہ گاہ بنارہا،ایوان صدر کے آشیر باد سے این آراوزدگان قانون کے شکنجے سے محفوظ رہے مگر ان کااحتساب ہم کریں گے ۔ میاں نصیراحمد نے کہا کہ ہم نے پی پی155کی ایک ایک گلی اورہرمحلے میں ترقیاتی کام کرائے ۔گلیوں کی پختہ تعمیر ،پینے کے صاف پانی کی فراہمی اورسیوریج سسٹم کواپ گریڈ کرناہماری عوام دوستی کازندہ ثبوت ہے ۔

خواجہ سعید رفیق

مزید : صفحہ آخر