برازیل ،وفادار کتا آٹھ دن تک ہسپتال کے دروازے پر مالک کا منتظر رہا

برازیل ،وفادار کتا آٹھ دن تک ہسپتال کے دروازے پر مالک کا منتظر رہا

ریو ڈی جنیرو(آن لائن)پالتو جانوروں کی اپنے مالکان کے ساتھ والہانہ محبت بے مثل ہے اور آئے روز اس کی مثالیں سامنے آتی رہتی ہیں۔ کتے کی اپنے مالک سے اٹوٹ محبت اور وفاداری کا ایک تازہ واقعہ حال ہی میں برازیل میں پیش آیا ہے، جس کی خبر جنگل کی آگ کی طرح براعظموں کو عبور کرتی تیزی کے ساتھ دنیا میں پھیل رہی ہے۔ برازیلی میڈیا نے اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کی سیکو نامی ایک کتا آٹھ دن تک ہسپتال کے دروازے پر بیٹھا اپنے مالک کی بخیریت واپسی کا بے تابی سے انتظار کرتا رہا۔ آٹھ روز بعد جب اس نے اپنے مالک کو وہیل چیئر پر دیکھا تو وہ اس سے اس طرح لپٹ کر لاڈ پیار کرنے لگا جیسے اسے کل کائنات مل گئی ہو۔

رپورٹ کے مطابق 31مارچ کو جنوبی برازیل کی ریاست ریو گرانڈے ڈوسول کے شہر پاسو فونڈو میں 55 سالہ لاوری ڈاکوسٹا راہ چلتے ہوئے سر میں ایک پتھر لگنے سے زخمی ہو گیا جسے راہ گیروں نے قریبی ہسپتال پہنچایا تو اس کا کتا بھی اسپتال کی طرف اس کے ساتھ گیا۔ڈاکوسٹا کے سر میں لگا زخم گہرا تھا جس کی سرجری کی گئی لیکن ڈاکٹروں کو پتہ چلا کہ اسے کینسر بھی ہے۔ ڈاکٹروں نے کینسر کا ناسور ختم کرنے کے لیے مزید چند دن اسے ڈسچارج نہ کرنے کا فیصلہ کیا۔ اس طرح کتے کو اپنے مالک کی خیر خبر کا پتہ نہ چل سکا، لیکن وہ اسپتال کے دروازے سے باہر آنے والے ہر شخص کو توجہ سے دیکھتا کہ مبادیٰ کہ اس کا مالک ہو۔ آٹھ دن بعد اسپتال کے عملے نے ڈاکوسٹا کو بتایا کہ اس کا ایک کتا اسپتال کے مرکزی دروازے پر بیٹھا ہے۔ڈاکوسٹا وہیل چیئر پر"سیکو" کے پاس پہنچا۔ مالک کو دیکھتے ہی کتے نے اچھل کود شروع کر دی اور چھلانگ لگا کر اس کی گود میں جا بیٹھا۔ مالک کو بھی اپنے اس "عاشق" کتے کی حالت پر بہت دکھ ہوا۔ اس نے کتے کی کمر پر ہاتھ پھیرا اور اسے تسلی دی۔ اس وقت ڈاکوسٹا کے منہ سے صرف یہ لفظ نکلا "اے میرے اللہ!"۔ برازیلی میڈیا پر تیزی سے مقبول ہونے والے اس واقعہ کی ایک مختصر ویڈیو فوٹیج اب تیزی کے ساتھ عالمی میڈیا میں بھی مقبول ہو رہی ہے۔

 

مزید : عالمی منظر