چین پاکستان کے شعبہ توانائی میں سرمایہ کاری کیلئے پوری طرح کوشاں ہے

چین پاکستان کے شعبہ توانائی میں سرمایہ کاری کیلئے پوری طرح کوشاں ہے

اسلام آباد (اے پی پی) ماہرین اقتصادیات نے کہا ہے کہ چین پاکستان کے شعبہ توانائی میں سرمایہ کاری کیلئے پوری طرح کوشاں ہے ، وزیراعظم آفس میں خصوصی سیل کے قیام سے اقتصادی راہداری اور دیگر ترقیاتی منصوبوں کی بروقت تکمیل میں مدد ملے گی۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے پاک چائنہ ورکنگ گروپ کے اجلاس کے حوالے سے پاکستان ٹیلی ویژن کے پروگرام میں گفتگو کے دوران کیا۔ڈاکٹر صبور نے کہا کہ پاکستان کو توانائی کے بحران کا سامنا ہے جس کیلئے چین پوری طرح معاونت کیلئے تیار ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ دونوں ملکوں کے درمیان برادرانہ اور گہرے تعلقات ہیں اور موجودہ سیاسی قیادت بھی پوری صلاحیت رکھتی ہے کہ وہ ان ترقیاتی منصوبوں کو بروقت اور مﺅثر انداز میں پایہ تکمیل تک پہنچائے۔انھوں نے کہا کہ جنوبی کورین وزیراعظم کا حالیہ دورہ پاکستان اس بات کاثبوت ہے کہ بین الاقوامی سرمایہ کار وں کو موجودہ حکومت کی پالیسیوں پر مکمل اعتماد ہے ، چین نے پاکستان میں سرمایہ کاری کیلئے جو لائحہ عمل اختیار کیا ہے دوسرے ممالک بھی اس کو اپنانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ماہر اقتصادیات ڈاکٹر ایوب مہر نے کہا کہ گوادر سے کاشغر شاہراہ کی تعمیر سے علاقے میں بڑے پیمانے پر خوشحالی آئیگی، اس مقصد کیلئے وزیراعظم آفس میں سپیشل سیل کے قیام سے تمام چینی ترقیاتی منصوبوں باالخصوص توانائی کے منصوبے بروقت تکمیل میں مدد ملے گی۔

ماہر توانائی ڈاکٹر شعیب کا کہنا تھا کہ پاک چین تعلقات سوچ سے بھی گہرے ہیں اور پاک چائنہ ورکنگ گروپ کے متواتر اجلاس یہاں زیادہ سے زیادہ سرمایہ کاری میں معاون ثابت ہونگے،ضرورت اس امر کی ہے کہ بیرونی سرمایہ کاری کے حصول کیلئے ترقیاتی منصوبوں کی مینجمنٹ کو مﺅثر بنایاجائے۔

مزید : کامرس