کیلے کی پیداوار کو خطرہ، مہلک وائرس دنیا بھر میں پھیل گیا

کیلے کی پیداوار کو خطرہ، مہلک وائرس دنیا بھر میں پھیل گیا
کیلے کی پیداوار کو خطرہ، مہلک وائرس دنیا بھر میں پھیل گیا

  

نیویارک (بیورورپورٹ) کیلے کی پیداوار کو مہلک فنگس کے باعث دنیا بھر میں خطرہ ہے۔اقوام متحدہ کا کہنا ہے کہ ایک خطرناک فنگس دنیا بھر میں پھیل رہا ہے جس کی وجہ سے کیلے کی پیداوار میں کمی پیدا ہوسکتی ہے۔ اس فنگس نما بیماری کا نام ٹراپیکل ریس 4 اور پناما ہے۔ اقوام متحدہ کا ادارہ برائے خوراک اور زراعت (ایف اے او) کے مطابق بیس سال تک یہ وائرس جنوب مشرقی ایشیا میں تباہی پھیلانے کے بعد اب اس فنگس نے اردن اور افریقی ملک موزمبیق کا رخ کرلیا ہے،مستقبل میں یہ وائرس لاطینی امریکا کا رخ کرسکتا ہے۔ رپورٹ کے مطابق فصل تباہ ہونے کے بعد بھی یہ فنگس وائرس زمین کے اندر کئی سالوں تک موجود رہتا ہے۔ اتنی تیزی سے دنیا بھر میں اس فنگس کے پھیلنے کے بعد دنیا بھر میں کیلے کی پیداوار کے ختم ہونے کے امکانات بڑھنے لگے ہیں اورخطرہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ کیلے کی پیداوار میں 30فیصد کمی ہو سکتی ہے۔

مزید : بین الاقوامی