اوورسیز انویسٹرز چیمبرکی نئی ایمنسٹی سکیم متعارف کرانے کی مخالفت

اوورسیز انویسٹرز چیمبرکی نئی ایمنسٹی سکیم متعارف کرانے کی مخالفت

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


اسلام آباد (آن لائن) اوورسیز انویسٹرز چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری نے ایف بی آر کو کوئی نئی ایمنسٹی سکیم متعارف کرانے کی مخالفت کر دی ۔ ایمنسٹی سکیم سے ٹیکس دینے والوں کی حوصلہ شکنی ہوتی ہے ۔ آئندہ مالی سال 2017-18 کی بجٹ تجاویز کے حوالے سے او آئی سی سی آئی کا کہنا ہے کہ ملک میں ایمنسٹی سکیم کے کلچر کو ختم کرنے کی ضرورت ہے ۔ اس سے ٹیکس دینے والوں پر برا اثر پڑتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جو ٹیکس چوری کے مرتکب ہو رہے ہیں ان کو سخت سزائیں دینے کی ضرورت ہے ۔ٹیکس تجاویز میں او آئی سی سی آئی کا کہنا ہے کہ جن پر پہلے ہی ٹیکسز کا بوجھ ہے ان سے مزید ٹیکس نہ لئے جائیں البتہ جو ٹیکس نہیں دے رہے اور قومی خزانے کو نقصان پہنچا رہے ہیں ان سے ٹیکس حاصل کرنے کی پالیسی بنانی چاہئے ۔ او آئی سی سی آئی نے مزید کہا کہ حکومت کو ٹیکس کو بڑھانے کے حوالے سے قوانین میں بہتری لانے کی ضرورت ہے ۔ تمام سیکٹرز کو بغیر رعایت دیئے رجسٹرڈ کرنے کے ساتھ ساتھ ان کا این ٹی این نمبر ہونا بھی لازمی ہے ۔ ٹیکس حکام اس بات کو یقینی بنائیں کہ جس نمبر کا این ٹی این نمبر ہے وہ اپنی سالانہ انکم ٹیکس ، ویلتھ ریٹرن کو فائل کرتا ہو ۔او آئی سی سی آئی نے اپنی تجاویز میں کہا ہے کہ ٹیکس ریٹرن فائل کرنے والے افراد کو پانچ فیصد کے حساب سے ٹیکس ریبیٹ ملنا چاہئے ۔ اس سے ٹیکس کا کلچر پروان چڑھے گا ۔

مزید :

کامرس -