شام میں خودکش حملے میں ہلاکتوں کی تعداد 126 ہوگئی، مرنے والوں میں68 بچے بھی شامل،مزید ہلاکتوں کا خدشہ

شام میں خودکش حملے میں ہلاکتوں کی تعداد 126 ہوگئی، مرنے والوں میں68 بچے بھی ...
شام میں خودکش حملے میں ہلاکتوں کی تعداد 126 ہوگئی، مرنے والوں میں68 بچے بھی شامل،مزید ہلاکتوں کا خدشہ

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

دمشق(آئی این پی) شام کے شہر حلب میں خودکش حملے کے نتیجے میں ہلاکتوں کی تعداد 126 ہوگئی جس میں 68 بچے بھی شامل ہیں۔

غیرملکی میڈیا کے مطابق گزشتہ روز شام میں جنگجوں کے زیرقبضہ صوبہ حلب کے نواحی علاقے راشدین میں کار میں سوار خودکش بمبار نے شہر چھوڑ کر جانے والے قافلے کو نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں 39 افراد موقع پر ہی ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے تھے۔ دھماکے کے فوری بعد امدادی ٹیمیں موقع پر پہنچیں اور زخمیوں کو مختلف اسپتالوں میں منتقل کیا جہاں انہیں طبی امداد دی جارہی تھی کہ اس دوران متعدد افراد زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسے جن میں کمسن بچوں کی بڑی تعداد شامل ہے۔شام میں کام کرنے والی برطانیہ سے تعلق رکھنے والی انسانی حقوق کی تنظیم کے مطابق خودکش حملے میں ہلاک افراد کی تعداد 126 ہوگئی جن میں 68 بچے بھی شامل ہیں جب کہ اب بھی متعدد زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے۔حکام کے مطابق جنگ زدہ علاقوں میں پھنسے شہریوں کے انخلا کے لئے ایران اور قطر نے معاہدہ کیا تھا جس کے بعد پہلے مرحلے میں فوا اور کفرایا کے علاقوں سے 5 ہزار اور جنگجوں کے زیر قبضہ علاقے مادایا اور زبادانی سے 2200 افراد کا انخلا کرنا تھا۔ جنگ سے متاثرہ علاقوں سے انخلا کے لئے ہزاروں افراد باغیوں کے زیرقبضہ علاقے راشدین میں جمع تھے کہ دھماکا ہوگیا۔