ملتان میں غیر قانونی طور پر سینکڑوں نجی سکولز پیف پارٹنر بن گئے

ملتان میں غیر قانونی طور پر سینکڑوں نجی سکولز پیف پارٹنر بن گئے

ملتان (سٹاف رپورٹر) سینکڑوں غیر رجسٹرڈ سکولز غیر قانونی طور پر پیف پارٹنر بن گئے‘مالکان دولت سے کھیلنے لگے ‘ معلوم ہوا ہے کہ پنجاب ایجوکیشن فاؤنڈیشن کے افسروں و اہلکاروں کی ملی بھگت کے باعث ملتان میں غیر قانونی طور پر سیکڑوں نجی سکولز پیف پارٹنر بن گئے ہیں ‘ پنجاب ایجوکیشن فاؤنڈیشن کی پالیسی کے برعکس یہ سکولز سرکاری سکولز کی ایک کلومیٹر کی حدکے اندر کھلے ہوئے ہیں بلکہ کئی پیف پارٹنر سکولز ایک دوسرے کے بھی قریب واقع ہیں‘ پالیسی کے(بقیہ نمبر17صفحہ12پر )

برعکس متعدد غیر رجسٹرڈ سکولز بھی پیف پارٹنر بن کر حکومت پنجاب سے ماہانہ لاکھوں روپے ناجائز بٹور رہے ہیں اس سے ملتان سمیت صوبے میں حکومت پنجاب کو کروڑوں روپے نقصان ہو رہاہے کیونکہ سرکاری سکولز میں انرولمنٹ کا ٹارگٹ پورا نہیں ہو رہا اور اساتذکی ماہانہ تنخواہوں کی مد میں حکومت پنجاب ایک ارب روپے سے زائدماہانہ برداشت کر رہی ہے تو دوسری جانب سرکاری سکولز کے نزدیک غیر قانونی طور پر کھلے پیف پارٹنر سکولز کو بھی ماہانہ کروڑوں روپے بلا وجہ دے رہی ہے کیونکہ سرکاری سکولز کے قریب ان سکولز کی ضرورت ہی نہیں ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر