پنجاب حکومت نے تھانہ کلچر تبدیلی کیلئے جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کیا

پنجاب حکومت نے تھانہ کلچر تبدیلی کیلئے جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کیا

راولپنڈی(جنرل رپورٹر)پنجاب پولیس کے 357 سب انسپکٹروں اور 314اسسٹنٹ سب انسپکٹروں کی پاسنگ آؤٹ تقریب پولیس ٹریننگ کالج، سہالہ میں منعقد ہوئی جس کے مہمان خصوصی ایڈیشنل انسپکٹر جنرل آف پولیس ٹریننگ طارق مسعود یاسین تھے۔ اس موقع پرکمانڈنٹ پولیس ٹریننگ کالج سہا لہ کیپٹن (ر) احسان طفیل اور دیگر متعلقہ پولیس افسران بھی موجود تھے۔ تربیت مکمل کرنیوالے پولیس افسران میں 18ایم فل، 28انجینئرز، 55لاء گریجوایٹس، 6ویٹرنری ڈاکٹر ز اور 221ایم اے، ایم بی اے، ایم ایس سی اور ایم ایس اور باقی گریجوایٹس ہیں جبکہ 12خواتین پولیس افسران بھی شامل ہیں۔ اس موقع پر تربیت مکمل کرنے والے پولیس افسران نے قانون کی بالا دستی کو یقینی بنانے اور شہریوں کے حقوق اور ان کی عزت نفس کے تحفظ کا حلف اٹھایا۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے، ایڈیشنل آئی جی طارق مسعود یاسین نے کہاکہ گذشتہ چند برسوں میں پنجاب حکومت نے تھانہ کلچر کو بدلنے کیلئے جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کیا ہے جن میں فرنٹ ڈیسک کا قیام، 8787پولیس شکایت نمبر، پولیس ریکارڈ مینجمنٹ سسٹم ، کرمنل ریکار ڈ مینجمنٹ سسٹم اور سیف سٹی پروجیکٹس شامل ہیں۔ ا نہوں نے تربیت مکمل کرنیوالے پولیس افسران کو کہا کہ اپنے فرائض منصبی کی انجام دہی کیلئے دنیاوی لالچ، ذاتی مفاد اور غرور و تکبر جیسی خامیوں کو پس پشت ڈال کر کام کریں۔ انہوں نے کہاکہ پولیس کالج سہالہ کو یہ اعزاز حاصل ہے اس میں ملک کے مختلف قانون نافذ کرنیوالے اداروں کے علاوہ غیر ملکی پولیس افسران بھی تربیت حاصل کر رہے ہیں۔کمانڈنٹ پولیس ٹریننگ کالج سہا لہ کیپٹن (ر) احسان طفیل نے کہاکہ سہالہ پولیس ٹریننگ کالج میں 86,000پولیس افسران تربیت حاصل کر چکے ہیں جن کا تعلق چاروں صوبوں ،ریلوے پولیس، موٹر وے پولیس، نیب، ایف آئی اے ، آزاد جموں و کشمیر ، وفاقی دارلحکومت اور کسٹمز سے ہے۔ انہوں نے کہاکہ پولیس افسران کو تفتیش کے جدید اصولوں، جیو فینسنگ، مشکل حالات سے نمٹنے کیلئے غصہ پر قابو پانے کی تربیت دی گئی ہے اور آئی ایس آئی ، آئی بی اور سی ٹی ڈی کی مدد سے انٹیلی جنس ٹریننگ بھی دی گئی۔تقریب میں دوران تربیت اعلی کارکردگی کا مظاہرہ کرنیوالے افسران میں شیلڈیں اور انعامات بھی تقسیم کئے گے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر