کوئٹہ میں دہشتگردی کے خلاف آل پاکستان ورکرز کنفیڈریشن نے "یوم سوگ" منایا

کوئٹہ میں دہشتگردی کے خلاف آل پاکستان ورکرز کنفیڈریشن نے "یوم سوگ" منایا

لاہور(پ ر) کوئٹہ میں معصوم شہریوں پر دہشت گردی کے خلاف محنت کشوں نے آل پاکستان ورکرز کنفیڈریشن کے زیراہتمام "یوم سوگ" منایا اور زبردست احتجاجی مظاہرہ کیا کارکنوں نے دہشت گردی کے خلاف بلوچستان کے عوام کے ساتھ یکجہتی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اس دہشت گردی کو انسانیت کا قتل قرار دے کر حکومت سے پْرزو مطالبہ کیا کہ وہ متاثرہ خاندانوں کی ہر ممکن مدد کریں۔

وزیراعظم اور صوبائی حکومتوں سے پْرزور مطالبہ ہے وہ محنت کشوں اور غریب عوام کی مشکلات کے ازالہ کیلئے بجٹ میں سرکاری و نیم سرکاری ملازمین کو ریلیف دے۔

سرکاری، نجی ، صنعتی و تجارتی اداروں کے ملازمین کی اْجرتوں وپنشنوں میں اسمبلی کے ارکان کی طرح اضافہ کا اعلان کرے اور ملک میں صدر مملکت سے لیکر ہر جگہ سادگی اپنا کر جاگیرداروں و سرمایہ دارو، بڑے تاجروں سے ٹیکس وصول کرکے ملک میں غربت ، جہالت، بے روزگاری اور امیر وغریب کے مابین روز افزوں بے پناہ فرق جلد دور کرنے اور قومی اقتصادی خودکفالت اپنا کر پاکستان کو غیر ملکی قرضوں کی زنجیروں سے آزاد کرے اس مظاہرہ کی قیادت بزرگ مزدور راہنماء خورشیداحمد جنرل سیکرٹری بمعہ محترمہ روبینہ جمیل صدر، یوسف بلوچ چیئرمین، اکبر علی خان ایڈیشنل جنرل سیکرٹری ، اْسامہ طارق،چوہدری انور گجر(ریلوے)، حسن محمد رانا(پی ٹی سی ایل)،خوشی محمد کھوکھر، نیاز خان، صلاح الدین ایوبی ودیگر نمائندگان کنفیڈریشن کررہے تھے آخر میں مظاہرین نے کوئٹہ کے شہید شہریوں کے لئے دعائے مغفرت اور اْن کے لواحقین کے لئے صبر جمیل اور زخمی شہریوں کی جلد صحت یابی کے لئے دعا کی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1