خواتین کی بے وفائی ان کے چہرے کی وجہ سے نہیں پکڑی جاتی، تازہ تحقیق میں حیران کن انکشاف

خواتین کی بے وفائی ان کے چہرے کی وجہ سے نہیں پکڑی جاتی، تازہ تحقیق میں حیران ...
خواتین کی بے وفائی ان کے چہرے کی وجہ سے نہیں پکڑی جاتی، تازہ تحقیق میں حیران کن انکشاف

  

کنبرا(مانیٹرنگ ڈیسک) مردوں اور خواتین کے چہروں سے ان کی بے وفائی کو پکڑنے کے متعلق سائنسدانوں نے ایک حیران کن انکشاف کر دیا ہے۔ میل آن لائن کے مطابق نئی تحقیق میں آسٹریلیا کے سائنسدانوں نے بتایا ہے کہ ”بے وفائی کی علامتیں مردوں کے چہرے پر کسی تحریر کی طرح لکھی ہوتی ہیں اور ان کے چہرے کو دیکھ کر ہی بخوبی پتا چلایا جا سکتا ہے کہ وہ اپنی بیوی سے بے وفائی کر رہے ہیں لیکن خواتین کے چہرے ان کی بے وفائی کی کوئی علامت ظاہر نہیں کرتے، چنانچہ ان کے چہرے کو دیکھ کر ان کے بے وفا ہونے کا پتا چلانا ناممکن ہے۔“

یونیورسٹی آف ویسٹرن آسٹریلیا کے سائنسدانوں نے اس تحقیق میں 751مردوخواتین کچھ مردوں اور خواتین کی تصاویر دکھائیں اور ان سے یہ سوال کیا کہ ان میں سے کون سے مرد یا عورت اپنے شریک حیات سے بے وفائی کر رہا ہے۔ حیران کن طور پر شرکاءمیں سے ہر پانچ میں سے ایک نے تصاویر میں موجود مردوں کو پہچان لیا کہ وہ بے وفائی کر رہے ہیں۔ اس کے برعکس خواتین کی تصاویر میں کوئی ایک بھی نہیں یہ پتا نہیں چلا سکا کہ کون سی خاتون اپنے شوہر سے بے وفائی کر رہی ہے۔ سائنسدانوں نے شرکاءسے یہ بھی پوچھا کہ ان تصاویر میں سے کون سے مرد وں یا عورتوں کے مستقبل میں بے وفائی کرنے کے امکانات ہیں؟ یہاں بھی 23فیصد لوگوں نے مردوں کے متعلق درست پیش گوئی کر دی تاہم خواتین کے متعلق کوئی کچھ نہیں بتا سکا۔ تحقیق میں شرکاءنے جن مردوں کو بے وفا قرار دیا وہ خاصے تنومند اور مضبوط پٹھوں والے تھے۔ اس کے برعکس خوش شکل مگر متناسب جسم کے مالک مردوں کو کم لوگوں نے بے وفا قرار دیا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -